جرمنی میں 19سالہ لڑکی کو جنسی زیادتی کے بعد قتل کرنے کا شبہ، افغان لڑکاگرفتار

جرمنی میں 19سالہ لڑکی کو جنسی زیادتی کے بعد قتل کرنے کا شبہ، افغان لڑکاگرفتار
جرمنی میں 19سالہ لڑکی کو جنسی زیادتی کے بعد قتل کرنے کا شبہ، افغان لڑکاگرفتار

  

برلن(آئی این پی)جرمنی میں پولیس نے 19سالہ لڑکی کو جنسی زیادتی کے بعد قتل کرنے کے شبے میں 17سالہ افغان لڑکے کو گرفتار کرلیا۔غیر ملکی میڈیاکے مطابق جرمن پولیس نے رواں برس 16 اکتوبر کو ایک 19سالہ لڑکی کے ساتھ جنسی زیادتی کے بعد اسے قتل کر دینے کے شبے میں ایک 17 سالہ افغان مہاجر کو گرفتار کر لیا ہے۔ پولیس نے اس گرفتاری کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ یہ جاننے کی کوشش کی جا رہی ہے کہ اس افغان لڑکے اور مقتولہ میں پہلے سے کوئی شناسائی تھی یا نہیں۔

پولیس کے مطابق جائے وقوعہ کے قریب نصب کردہ خفیہ کیمروں میں اس افغان مہاجر کو دیکھا گیا تھا۔ پولیس نے بتایا کہ جائے وقوعہ سے انسانی سر کا ایک بال بھی ملا تھا اور اس بال کے ڈی این اے ٹیسٹ سے ثابت ہو گیا تھا کہ یہ بال واقعی اسی لڑکے کا ہے، جو جائے حادثے پر اس طالبہ کے قتل سے کچھ دیر پہلے دیکھا بھی گیا تھا۔ یہ نابالغ افغان پناہ گزین لڑکا 2015میں اکیلا ہی جرمنی پہنچا تھا۔

مزید : بین الاقوامی