یکم دسمبر تک جننگ فیکٹریوں میں1کروڑایک لاکھ سے زائد گانٹھ کپاس کی آمد

یکم دسمبر تک جننگ فیکٹریوں میں1کروڑایک لاکھ سے زائد گانٹھ کپاس کی آمد

ملتان(جنرل رپورٹر)پاکستان کاٹن جنرز ایسوسی ایشن (پی سی جی اے)نے کپاس کی فیکٹریوں میں آمد کے اعدادو شمار جاری کر دیئے جس کے مطابق یکم دسمبر2017تک ملک(بقیہ نمبر19صفحہ12پر )

کی جننگ فیکٹریوں میں1کروڑ1لاکھ 32ہزار074گانٹھ کپاس آئی۔ یکم دسمبر2016تک 97 لاکھ78ہزار451گانٹھ کپاس فیکٹریوں میںآئی تھی۔گذشتہ سال کی اسی مدت کے مقابلے میں3لاکھ 53ہزار623گانٹھ کپاس فیکٹریوں میں زائد آئی ہے ۔ اضافے کی شرح 3.62فیصد رہی۔صوبہ پنجاب کی فیکٹریوں میں 61لاکھ 7ہزار802گانٹھ کپاس آئی ہے ۔گذشتہ سال 61لاکھ58 ہزار 870 گانٹھ کپاس فیکٹریوں میں آئی تھی۔ جو گذشتہ سال کی اسی مدت میں فیکٹریوں میں آنے والی فصل سے 51ہزار068گانٹھ کپاس کم ہے ۔ پنجاب میں کمی کی شرح 0.83فیصد رہی ۔صوبہ سندھ کی فیکٹریوں میں 40لاکھ 24ہزار 272گانٹھ کپاس فیکٹریوں میں آئی ہے ۔ گذشتہ سال 36لاکھ 19ہزار581گانٹھ کپاس فیکٹریوں میں آئی تھی ۔ جو گذشتہ سال کی اسی مدت میں فیکٹریوں میں آنے والی فصل سے 4 لاکھ 4ہزار691گانٹھ کپاس زائدہے ۔صوبہ سندھ میں اضافے کی شرح 11.18فیصد رہی ۔ یکم دسمبر 2017تک فیکٹریوں میں آنے والی کپاس سے 92 لاکھ 81ہزار238گانٹھ روئی تیار کی گئی ۔ ملک میں 960جننگ فیکٹریاں آپریشنل ہیں ۔ ایکسپورٹرز نے رواں سیزن میں2لاکھ 11ہزار989گانٹھ روئی خرید کی ہے جبکہ ٹیکسٹائل سیکٹرنے 80لاکھ 62ہزار258گانٹھ روئی خرید کی ہے ۔ ٹریڈنگ کارپوریشن آف پاکستان(TCP)نے کاٹن سیزن 2017-18میں خریداری نہیں کی ہے ۔ صوبہ پنجاب میں666جننگ فیکٹریاں آپریشنل ہیں اور56لاکھ 77ہزار589گانٹھ روئی تیار کی گئی ہے۔ضلع ملتان میںیکم دسمبر2017تک2لاکھ 45 ہزار745گانٹھ کپاس،ضلع لودھراں میں 1لاکھ 30ہزار204گانٹھ کپاس، ضلع خانیوال میں 6لاکھ 21ہزار 909گانٹھ کپاس ، ضلع مظفر گڑھ میں2 لاکھ90 ہزار 926گانٹھ کپاس، ضلع ڈیرہ غازی خان میں3لاکھ 65ہزار799گانٹھ کپاس، ضلع راجن پور میں 4لاکھ 9ہزار700گانٹھ کپاس، ضلع لیہ میں 2لاکھ58 ہزار538گانٹھ کپاس، ضلع وہاڑی میں5لاکھ 22ہزار103گانٹھ کپاس،ضلع ساہیوال میں 2 لاکھ29ہزار917گانٹھ کپاس،ضلع میانوالی میں 1لاکھ65ہزار 615گانٹھ کپاس، ضلع رحیم یار خان9لاکھ1ہز ار064گانٹھ کپاس، ضلع بہاولپور میں 8لاکھ79ہزار107گانٹھ کپاس،ضلع بہاولنگرمیں 7لاکھ49ہزار149گانٹھ کپاس فیکٹریوں میں آئی ہے ۔ ضلع سانگھڑمیں 13لاکھ 61ہزار 546 گانٹھ کپاس، ضلع میر پور خاص میں2لاکھ19ہزار294 گانٹھ کپاس،ضلع نواب شاہ میں 3لاکھ42 ہزار934گانٹھ کپاس ،ضلع نو شہرو فیروز میں 3لاکھ59ہزار236گانٹھ کپاس،ضلع خیر پور میں 3لاکھ23 ہزار538 گانٹھ کپاس ،ضلع سکھر میں 5لاکھ40ہزار 709گانٹھ کپاس،ضلع جام شورومیں 1لاکھ28ہزار679گانٹھ کپاس اور ضلع حیدرآبادمیں 2 لاکھ 46ہزار 496 گانٹھ کپاس فیکٹریوں میں آئی ہے۔ غیر فروخت شدہ سٹاک 18لاکھ57 ہزار827گانٹھ کپاس اور روئی موجود ہے ۔

مزید : ملتان صفحہ آخر