حلقہ نیابت میں چار ارب روپے کے ترقیاتی منصوبوں پر کام جاری ہے : ارشد عمر زئی

حلقہ نیابت میں چار ارب روپے کے ترقیاتی منصوبوں پر کام جاری ہے : ارشد عمر زئی

چارسدہ (بیورو رپورٹ) سابق صوبائی وزیر اور قومی وطن پارٹی کے ضلعی چےئرمین ایم پی ارشد خان عمر زئی نے کہا ہے کہ ان کے حلقہ نیابت میں چار ارب روپے کے ترقیاتی منصوبوں پر کام جاری ہے ۔ صوبائی حکومت کے تبدیلی کے دعوے جھوٹ کا پلندہ ثابت ہوئے مگر اے این پی دور حکومت سے موجودہ صوبائی حکومت کی کار کر دگی کافی بہتر ہے ۔ چارسدہ کیلئے ٹیکنیکل یونیورسٹی کیمپس منظور کیا مگر بیورو کریسی رکاو ٹ بن گئی ۔ موجودہ بلدیاتی نظام سے عوام مستفید نہیں ہو رہے ۔وہ چارسدہ جرنلسٹس کے پرو گرام "ملاقات"میں اظہار خیال کر رہے تھے ۔ اس موقع پر ان کے معاون حصوصی فرمان اللہ عمر زئی اور دیگر ذمہ داران بھی موجود تھے ۔ سابق صوبائی وزیر ایم پی اے ارشد خان عمر زئی نے کہا کہ شہید عالمزیب عمر زئی کے نقش قدم پر چل کر عوام کے مسائل اور مشکلات حل کرنے کیلئے دن رات جدو جہد کر رہے ہیں ۔ حلقہ پی کے 19میں ایری گیشن ، تعلیم ، صحت اور مواصلات میں اربوں روپے کے منصوبے شروع کئے ہیں جس کی تکمیل سے عوام خوشگوار تبدیلی محسوس کرینگے ۔ انہو ں نے کہاکہ قومی وطن پارٹی کیلئے ان کے بھائی عالمزیب عمر زئی نے جان کا نذرانہ پیش کیا اور وہ بھی قومی وطن پارٹی پر قربان ہونے سے دریغ نہیں کرینگے ۔ اے این پی دور حکومت میں کرپشن اور اقرباء پر وری کا بول بالا تھا جو گزشتہ عام انتخابات میں اے این پی کی شکست کا سبب بنی۔ ایم ایم اے نے اسلام اور اے این پی نے پختونوں کے نام پر ہمیشہ عوام کا استحصال کیا ۔ انہوں نے کہاکہ گزشتہ انتخابات میں عمران خان نے تبدیلی کے نام پر پختونوں سے ووٹ لیا مگر اقتدار میں آکر تمام وعدے اور دعوئے بھول کر دھرنوں کی سیاست شروع کی جس کی وجہ سے وفاقی حکومت نے صوبائی حکومت سے تعاون ختم کیا ۔ انہوں نے کہاکہ عمران خان لاہور اور اسلام آباد میں میٹرو بس پر تنقید کر تے رہے مگر آج پشاور میں سود پر قرضہ لیکر وفاقی حکومت کی طرز پر ریپڈ بس ٹرانزٹ منصوبہ شروع کیاہے ۔ انہوں نے کہاکہ خیبر پختونخوا حکومت کے پاس خزانے میں ایک دھیلہ بھی نہیں جبکہ دوسری طرف وفاقی حکومت بھی صوبے کو اپنا حق نہیں دے رہی۔انہوں نے کہا کہ عمران خان احتجاجی سیاست کی بجائے خیبر پختونخوا کے مسائل پر توجہ دیتے اور دیگر صوبوں کیلئے مثال قائم کر تے تو یقیناًآئندہ عام انتخابات میں وہ آسانی سے وزارت عظمیٰ کے منصب پر فائز ہو تے ۔صوبائی حکومت کے دعوؤں کے برعکس بلدیاتی نظام سے عوام کو کوئی فائدہ نہیں پہنچ رہا ۔ انہوں نے کہاکہ پی کے 19میں د و بار سیلاب کی وجہ سے بڑی تباہی مچی جس کی وجہ سے تمام دریاؤں پر خفاظتی پشتے تعمیر کئے جا رہے ہیں ۔انہوں نے کہاکہ اپنے دور وزارت میں چارسدہ کیلئے ٹیکنکل یونیورسٹی کیمپس منظور کیا مگر بیورو کریسی نے رکاوٹ ڈال کر منصوبہ ختم کیا جس کی وجہ سے چارسدہ کے ہزاروں طلباء جدید ٹیکنکل ایجوکیشن سے محروم رہ گئے ۔ ایک سوال کے جواب میں ارشد خان عمر زئی نے کہا کہ ایم پی اے سلطان محمد سمیت قومی وطن پارٹی کے تمام ایم پی ایز کو یکساں گرانٹ فراہم کیا گیا ۔ انہوں نے کہاکہ اپنے حلقہ نیابت کے عوام کے فلاح و بہود کے منصوبوں کیلئے گزشتہ روزبھی وزیر اعلی پر ویز خٹک سے ملاقات کی تھی ۔ انہوں نے مزید کہا کہ کار گردگی کی بنیاد پر آئندہ عام انتخابات میں قومی وطن پارٹی بھاری اکثریت سے کامیابی حاصل کریگی ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر