سندھ کے عوام کا سازش کے تحت استحصال ہورہاہے ،فاروق ستار

سندھ کے عوام کا سازش کے تحت استحصال ہورہاہے ،فاروق ستار

حیدرآباد(بیورو رپورٹ )ایم کیو ایم پاکستان کے سربراہ ڈاکٹرفاروق ستار نے کہا ہے کہ سندھ کے عوام کاچالاکی اور مکاری کے ساتھ استحصال ہورہاہے ،9 سال سے صوبے پر مصنوعی اکثریت کی بنیاد پر ایک طبقہ جمہوریت کے نام پر قابض ہے،سندھ کے عوام ظلم کی چکی میں پس رہے ہیں۔حیدرآبادکے اکبری گراؤنڈ میں میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے ڈاکٹرفاروق ستارنے کہاکہ ایک طرف سندھ کے شہروں کااستحصال اور دیہات میں ظلم ہو رہا ہے،شہروں کوکھنڈربنایاگیا تودیہی علاقوں کاحال بھی مختلف نہیں ہے۔انہوں نے کہاکہ 2018 کیا اگر 2017میں الیکشن ہوجائیں تو ایم کیو ایم الیکشن لڑنے کے لئے تیار ہے، ایم کیو ایم کا ووٹ بینک تقسیم نہیں ہوگا۔ فاروق ستار نے کہا کہ بلدیاتی نمائندوں کی کارکردگی پر مجھے بھی تشویش ہے۔آج یہ عزم لے کر آیا ہوں کہ آئندہ چند دنوں میں اپنی تنظیم اور بلدیاتی نمائندوں میں ٹیم ورک پیدا کرنا ہے، ابھی نہیں تو کبھی نہیں والی صورتحال ہے۔انہوں نے کہا کہ اپنی ٹیم کو میدان میں اتار کر میئر ہو ڈپٹی میئر ہو سب کے ہاتھ میں جھاڑو پکڑانی ہے، کس طرح لوگوں کو موٹیویٹ کرنا ہے یہ ہماری قیادت کی بھی آزمائش ہے۔انہوں نے کہاکہ ایم کیو ایم پاکستان 8 دسمبر کو حیدر آباد میں ریکارڈ توڑ جلسہ کرے گی۔جلسے بعد ایک مہینے کی صفائی مہم شروع کریں گے، 9 سال کے کچرے کو نہ اٹھاسکیں تو کم از کم 3 سال اور ایک سال کے کچرے کو اٹھا کر پھینکنا ہے۔انہوں نے کہاکہ ایم کیوایم لندن سے علیحدگی کے بعدپہلابڑاجلسہ کرنے جارہے ہیں،ایم کیوایم پاکستان کاجلسہ حیدرآباد کی تاریخ کابڑاجلسہ ہوگا۔فاروق ستار نے کہاکہ ہم خیرسگالی جذبے سے سندھ کی ثقافت کا دن منائیں گے۔

مزید : کراچی صفحہ اول