امریکاکا مہاجرین کے حوالے سے اقوام متحدہ کے معاہدے سے الگ ہونے کا اعلان

امریکاکا مہاجرین کے حوالے سے اقوام متحدہ کے معاہدے سے الگ ہونے کا اعلان
امریکاکا مہاجرین کے حوالے سے اقوام متحدہ کے معاہدے سے الگ ہونے کا اعلان

  

واشنگٹن(این این آئی)امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی انتظامیہ نے مہاجرین کے حوالے سے اقوام متحدہ کے ایک معاہدے سے الگ ہونے کا اعلان کیا ہے۔

غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق امریکا مہاجرین اور پناہ گزینوں کے حوالے سے اقوام متحدہ کے ایک معاہدے سے الگ ہو گیا ہے۔ امریکی سفیرکا کہنا ہے کہ مہاجرین اور پناہ گزینوں کی دوبارہ آبادکاری سے متعلق یہ منصوبہ امریکی پالیسی سے متصادم ہے۔ستمبر 2016ء میں اقوامِ متحدہ کی جنرل اسمبلی کے اجلاس کے دوران 193 رکن ممالک نے مہاجرین کے حقوق کے تحفظ کے حوالے سے ایک سیاسی معاہدے پر اتفاق کیا تھا۔ اس معاہدے کو ’’نیویارک ڈیکلریشن فار ریفیوجی اینڈ مائیگرینٹس‘‘ کا نام دیا گیا تھا۔ اس معاہدے کا مقصد دنیا بھر میں تارکین وطن کو تعلیم اور روزگار تک رسائی ممکن بنانا ہے۔ تاہم اس معاہدے پر عمل کرنا لازم نہیں تھا۔

ڈیلی پاکستان کے یو ٹیوب چینل کو سبسکرائب کرنے کیلئے یہاں پر کلک کریں

تاہم امریکی مشن نے اقوامِ متحدہ کے جنرل سیکرٹری کو آگاہ کیا کہ نیو یارک ڈیکلریشن میں بیشتر شرائط ایسی ہیں جو امریکا کی مہاجرت کی پالیسی کے برعکس ہیں۔ اسی باعث امریکی صدر ٹرمپ نے گزشتہ برس بین الاقوامی سطح پر حتمی اتفاق رائے حاصل کرنے والے اس معاہدے سے دستبرداری کا فیصلہ کیا ہے۔امریکی سفیر کا مزید کہنا تھاکہ ہم امریکا کے بہترین مفاد میں فیصلہ کریں گے کہ اپنی سرحدوں کی حفاظت کیسے کی جائے اور کس کو امریکا میں داخلے کی اجازت دی جائے۔

مزید : بین الاقوامی