زراعت پاکستانی معیشت کی لائف لائن ہے‘ ماہرین

زراعت پاکستانی معیشت کی لائف لائن ہے‘ ماہرین

لاہور(کامرس ڈیسک) لاہور چیمبر کے صدر الماس حیدر، سینئر نائب صدر خواجہ شہزاد ناصر، نائب صدر فہیم الرحمن سہگل و دیگر ماہرین نے سی اے سی پاکستان سمٹ سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ زراعت پاکستانی معیشت کی لائف لائن ہے، چین اور دیگر ممالک کے ساتھ مشترکہ منصوبہ سازی اور جدید ٹیکنالوجی کی منتقلی اس شعبے کو معاشی ترقی میں اپنا بھرپور کردار ادا کرنے میں مدد دے سکتی ہے۔ کانفرنس سے خطاب کرنے والے دیگر ماہرین میں چیئرمین انجینئرنگ کونسل آف پاکستان جاوید سلیم قریشی، محمد ندیم قریشی، چینی نمائندگان فین لیکیان، میگی ما کے علاوہ محمد اظہر، اللہ دتہ، سعد اکبر خان اور ڈاکٹر شیر علی شامل تھے۔ ماہرین نے زرعی پیداوار، خوراک کی بڑھتی طلب، فصلوں کی زیادہ پیداوار اور ان کے تحفظ سمیت دیگر موضوعات پر اظہار خیال کیا۔ انہوں نے کہا کہ زرعی پیداوار بڑھانے کے لیے ایسی ادویات استعمال کرنا ضروری ہے جن کے ماحول و انسانی صحت پر مضر اثرات مرتب نہ ہوں۔ ماہرین نے توقع ظاہر کی کہ چوتھی سی اے سی پاکستان سمٹ پاکستان اور چین کے درمیان زرعی شعبے میں تعاون بڑھانے اور جدید ٹیکنالوجی کی منتقلی میں مددگار ثابت ہوگی۔

مزید : کامرس