بائکو کا پاکستان میں گیسولین کی فراہمی کا شیئر 7گنا بڑھ گیا

بائکو کا پاکستان میں گیسولین کی فراہمی کا شیئر 7گنا بڑھ گیا

لاہور(پ ر)پاکستان کی سب سے بڑی آئل ریفائنری کمپنی، بائکو پٹرولیم پاکستان لمیٹڈ (بی پی پی ایل) نے 30 ستمبر 2018 کو اختتام پذیر ہونے والی پہلی سہ ماہی کے مالیاتی نتائج کا اعلان کیا ہے ۔ کمپنی کی مجموعی فروخت گزشتہ سال اسی سہ ماہی میں 41.4ارب روپے کے مقابلے میں 61فیصد اضافے سے 66.4ارب روپے ہوگئی۔ مجموعی آمدن گزشتہ سال 31.4 ارب روپے کے مقابلے میں 71 فیصد اضافے سے 53.7ارب روپے ہوگئی ۔ یہ سہ ماہی پاکستان میں آئل ریفائنریز کے لئے چیلنجنگ رہی جس کی بڑی وجہ خام تیل کی قیمتوں میں اضافہ اور روپے کی قدر میں گراوٹ ہے، جس سے اس شعبہ کے منافع میں کھچاؤ آیا ، تاہم بائکو نے باقی ریفائنریز کے مقابلے میں ان دونوں چیلنجز کا زیادہ بہتر انداز سے سامنا کیا ۔

بائکو پٹرولیم نے پہلی سہ ماہی میں 1.7 ارب روپے کا مجموعی منافع حاصل کیا۔ اس سہ ماہی میں خالص منافع 397ملین روپے ، یا فی شیئر 0.07روپے رہا۔ گزشتہ سال اسی مدت کے مقابلے میں مینوفیکچرنگ اخراجات میں اضافہ ہوا جس کی بڑی وجہ کمپنی کے دو نئے یونٹس ریفارمر اور آئیسومرائیزیشن کا قیام ہے۔ جولائی 2018میں آئیسومرائیزیشن یونٹ کے آغاز کے ساتھ کمپنی اب 100فیصد اپنے نیفتھا فیول کو موٹرگیسولین میں تبدیل کررہی ہے ۔ ملک گیر سطح پر موٹر گیسولین کی فراہمی کے نیٹ ورک میں کمپنی کا شیئر 1فیصد سے بڑھ کر 7فیصد ہوگیا ہے ۔

اگرچہ بائکو پٹرولیم انڈسٹری میں درپیش وسیع چیلنجز سے مبرا نہیں ہے ، تاہم کمپنی مزید کامیابیوں کے لئے بہت کچھ کرنے کے لئے تیار ہے اور اپنے شیئر ہولڈرز، صارفین اور دیگر تمام اسٹیک ہولڈرز کے لئے نمایاں فرق پیدا کرنے کے لئے پراعتماد ہے ۔

بائکو کا تعارف

بائکو پیٹرولیم پاکستان لمیٹڈ (بی پی پی ایل) پاکستان کی صف اول کے توانائی ساز اداروں میں سے ایک ہے جو آئل ریفائننگ، پیٹرولیم مارکیٹنگ اور پیٹرولیم لاجسکٹکس کے کاروبار سے وابستہ ہے۔ بائکو کا مشن یہ ہے کہ پاکستان اور بیرون ملک توانائی کی ضروریات پوری کی جائیں۔ کمپنی بہتر ماحولیات، صحت، حفاظتی معیارات برقرار رکھنے اور پائیدار منافع و پیداوار کے حصول کے تصور کے ساتھ وسیع اقسام کی پیٹرولیم مصنوعات تیار کرتی ہے۔

بائکو گنجائش کے اعتبار سے پاکستان کی سب سے آئل ریفائن کرنے والا ادارہ ہے اور یہ ملک کی واحد کمپنی ہے جس کے پاس خصوصی سنگل پوائنٹ مورنگ (ایس پی ایم) ہے۔ یہ ملک میں اپنی نوعیت کی پہلی سہولت گاہ ہے اور بدستور یہ پاکستان کی واحد تیرتی لیکویڈ پورٹ ہے جو اہم قومی اثاثہ ہے۔ بائیکو کی ایس پی ایم قوم کو فیول کی فراہمی کی مہارت میں مزید بہتری لے کر آئی ہے۔ گہرے سمندر میں اہم پوزیشن رکھنے کے باعث بائیکو کی ایس پی ایم بڑے جہازوں کی سیفٹی اور سیکورٹی کے لئے ہمہ وقت عملہ مختص ہے۔ یہ ایس پی ایم پاکستان کا واحد ٹرمینل ہے جس کے پاس ٹیئر 3 آئل اسپل ریسپانس کی ممبرشپ ہے۔

مزید : کامرس