مارک اپ کی شرح سنگل ڈیجٹ کی جائے: لاہور چیمبر

مارک اپ کی شرح سنگل ڈیجٹ کی جائے: لاہور چیمبر

لاہور(کامر س ڈیسک) لاہور چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے سینئر نائب صدر خواجہ شہزاد ناصر اور نائب صدر فہیم الرحمن سہگل نے سٹیٹ بینک آف پاکستان کی جانب سے مارک اپ ریٹ میں اضافے پر تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے مارک اپ کی شرح سنگل ڈیجٹ پر لانے کی ضرورت پر زور دیا ہے۔ ایک بیان میں لاہور چیمبر کے عہدیداروں نے کہا کہ انڈسٹری کو پہلے ہی زیادہ پیداواری لاگت، ریفنڈز میں تاخیر، زیادہ یوٹیلٹی پرائسز سمیت دیگر مسائل کا سامنا ہے، ایسے میں سٹیٹ بینک کی جانب سے مارک اپ ریٹ میں اضافہ ان کے لیے مزید مسائل پیدا کرے گا۔ انہوں نے کہا کہ صنعت سازی کا عمل تیز اور روزگار کے نئے مواقع پیدا کرنے کے لیے صنعتی شعبے کو سستے قرضوں کی فراہمی بہت ضروری ہے ۔

لیکن سٹیٹ بینک آف پاکستان نے مانیٹری پالیسی میں مارک اپ کی شرح بڑھاکر امیدوں پر پانی پھیر دیا ہے حالانکہ کاروباری برادری امید کررہی تھی کہ مارک اپ کی شرح میں کمی کا اعلان کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ خطے کے دیگر ممالک کو ان کی حکومتوں نے مراعات دی ہیں جن کی بدولت وہ عالمی منڈی پر غلبہ پارہے ہیں جبکہ پاکستان برآمدات بڑھانے کے لیے جدوجہد کررہا ہے، اسے سٹیٹ بینک آف پاکستان سمیت تمام حکومتی اداروں کی جانب سے ریلیف کی ضرورت ہے۔ انہوں نے کہا کہ مارک اپ کی زیادہ شرح کی وجہ نہ صرف صنعت اور معیشت کے مسائل مزید بڑھیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ سٹیٹ بینک آف پاکستان زمینی حقائق کو مدّنظر رکھتے ہوئے مارک اپ کی شرح سنگل ڈیجٹ تک لائے۔

مزید : کامرس