جنرل ہسپتال میں50بستروں پر مشتمل امراض نسواں کا نیا وارڈ قائم

جنرل ہسپتال میں50بستروں پر مشتمل امراض نسواں کا نیا وارڈ قائم

لاہور( جنرل رپورٹر ) جنرل ہسپتال انتظامیہ نے مریضوں کی بڑھتی ہوئی تعداد کے پیش نظر ایک اور مثبت اور مریض دوست قدم اٹھا یا ہے اور ہسپتال میں50بستروں پر مشتمل امراض نسواں کا نیا وارڈ قائم کر دیا اور اس نئے قائم کیے گئے گائنی یونٹ3میں متعلقہ ڈاکٹروں ،نرسو ں اور پیرا میڈیکل سٹاف کی ڈیوٹیاں بھی لگا دی گئیں ۔ پرنسپل امیر الدین میڈیکل کالج پروفیسر محمد طیب نے پروفیسر عالیہ بشیر ،ایم ایس ڈاکٹر محمود صلاح الدین ،ڈائریکٹر ایڈمنسٹریشن ڈاکٹر رانا محمد شفیق اور دیگر ڈاکٹروں کے ہمراہ اس نئی گائنی وارڈ کا دورہ کیا اور وہاں موجودہ سہولتوں کا جائزہ لیا ۔اس مو قع پر گفتگو کرتے ہوئے پرنسپل پروفیسر محمد طیب کا کہنا تھا کہ گائنی کے اس یونٹ کے ذریعے ہسپتال میں آنے والی خواتین کو علاج معالجے اور بالخصوص زچہ و بچہ کو بر وقت طبی سہولیات حاصل ہوں گی۔انہوں نے کہا کہ موجودہ حکومت کے ویژن کے مطابق ہر شعبے کو جدید تقاضوں سے ہم آہنگ کیا جا رہا ہے۔

اور شہریوں کو بلا تفریق معیاری طبی سہولتوں کی فراہمی کیلئے تمام دستیاب وسائل برؤئے کا ر لائے جار ہے ہیں ۔انہوں نے انکشاف کیا کہ آئندہ چند دنوں میں ایسے اقدامات اٹھائے جائیں گے جن کا مریضوں کو بلا واسطہ طور پر فائدہ ہو سکے ۔یہ امر قابل ذکر ہے کہ اس سے پہلے جنرل ہسپتال میں گائنی کے شعبے میں 2یونٹ کام کر رہے تھے جہاں اب پرنسپل پروفیسر محمد طیب نے گائنی یونٹ3کی منظوری پر صوبائی وزیر صحت ڈاکٹر یاسمین راشد اور محکمہ صحت پنجاب کے حکام کا شکریہ ادا کیا۔

مزید : میٹروپولیٹن 4