چینی سفارتکاروں کی ایس ایم ایس گارڈز کی بہادری کی تعریف

چینی سفارتکاروں کی ایس ایم ایس گارڈز کی بہادری کی تعریف

کراچی (پ ر)کراچی میں چینی قونصلیٹ جنرل نے اپنے ایک خط میں سیکورٹی اینڈ منیجمنٹ سروسز(SMS) گارڈز کی کارکردگی کی تعریف کرتے ہوئے کہاکہ 23 نومبر کو جب کراچی میں واقع چینی قونصلیٹ جنرل پر تین مسلح دہشتگردوں نے حملہ کیا تو ان کا ایک آدمی پہلی چیک پوسٹ پر ہلاک ہوگیا اور باقی دو ویزہ سیکشن کی جانب بھاگے، اور وہاں گھسنے کی کوشش کی۔ تین غیر مسلح سیکورٹی گارڈز (شوکت علی تالپور، محمد کامران اور محترمہ روبی عبدالرزاق ) ، خصوصاً ایس ایم ایس گارڈ شوکت علی تالپور نے اپنی ڈیوٹی بہترین انداز میں ادا کی۔ان کی بہترین اور زبردست کارکردگی نے قانون نافذ کرنے والے اداروں کی مدد کی کہ وہ حملہ آوروں کو ہلاک کرسکیں، اور مزید انسانی جانوں کے اتلاف سے بچا سکیں۔چینی قونصل جنرل جناب وانگ یو، عملے کے تمام افراد کے ساتھ، مذکورہ تینوں گارڈز کے بے حد شکر گزار ہیں۔ ہم گارڈز کے پیشہ ورانہ روّیئے، بہادری اور شاندار تربیت پرSMS کی بھی تعریف کرتے ہیں۔ چینی قونصلیٹ جنرل نے مزید کہا’’ ہم یقین رکھتے ہیں کہ آئندہ بھی تمام چینی اور پاکستانی دوست ان دونوں ممالک کے امن اور خوشحالی کے لئے قریبی تعلقات کو فروغ دینا جاری رکھیں گے۔‘‘اپنے شکریئے کے خط میں قونصلیٹ جنرل نے شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ یہ پاکستان میں چینی سفیروں کو سیکورٹی اور تحفظ فراہم کرنے کا ایک عظیم امتیاز و اعزاز ہے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر