مردوں کی نسبت خواتین کو کھیلوں کی مناسب سہولتیں میسر نہیں ،عاطف خان

مردوں کی نسبت خواتین کو کھیلوں کی مناسب سہولتیں میسر نہیں ،عاطف خان

پشاور( سٹاف رپورٹر)خیبر پختونخواکے سینئر وزیر برائے کھیل ،سیاحت ،ثقافت و امور نوجوانان عاطف خان نے ڈویژنل سطح پر فیمل انڈور سپورٹس سہولیات فراہم کرنے کے حوالے سے نئی سکیم کی منظوری دیتے ہوئے متعلقہ حکام کو جلد ازجلد اس پر کام شروع کرنے کی ہدایت کی ہے۔یہ منظوری انہوں نے کھیلوں کے حوالے سے منعقدہ اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے دی۔اس موقع پر ایڈیشنل سیکٹری سپورٹس بابر خان اور ڈی جی سپورٹس جنید خان بھی موجود تھے۔ انڈور فیمل سپورٹس سہولیات صوبے کے 7 ڈویژن ہیڈ کوارٹرز پشاور،مردان،ڈیرہ اسماعیل خان،بنوں،مالاکنڈ اور ایبٹ آباد میں فراہم کی جائیگی جس پر کل 700 ملین روپے لاگت آئیگی۔سینئر وزیر نے اس موقع پر کہا کہ خیبرپختونخوا میں مردوں کی نسبت خواتین کو کھیلوں کی مناسب سہولیات میسر نہیں ہیں جسکی وجہ سے خواتین کو کھیلوں کے شعبے میں آگے بڑھنے کے بہت کم مواقع ملتے ہیں۔انڈور سپورٹس سہولیات فراہم ہونے سے خواتین کو کھیلوں کے شعبے میں آگے بڑھنے کے مواقع برابر میسر آجائینگے۔انہوں نے کہا کہ دیگر شعبوں کی طرح کھیلوں کے شعبے میں بھی ہمارے صوبے کے خواتین کسی سے کم نہیں ہیں لیکن ضرورت اس امر کی ہے کہ انہیں برابر سہولہات میسر کی جائیں اور انڈور فیمل سپورٹس سہولیات کی فراہمی اس سلسلے کی پہلی کڑی ہے۔سینئر وزیر نے کہا کہ ڈویژنل سطح پر خواتین کو انڈور سپورٹس سہولیات کی فراہمی کے بعد ضلع اور تحصیل کی سطح پر بھی خوا تین کو اس قسم کی سہولیات فراہم کی جائینگی تاکہ وہ کھیل کے شعبے میں آگے بڑھ کر اپنے صوبے اور ملک کا نام روشن کرسکیں۔اس موقع پر سینئر وزیر نے محکمہ کھیل کے حکام کو صوبے میں کھیلوں کے فروغ کے لئے ٹھوس اقدامات اٹھانے کی ہدایت کرتے ہوئے زیادہ سے زیادہ کھیلوں کے مقابلوں کے انعقاد پر زور دیا تاکہ صوبے کے نوجوانوں کو زیادہ مواقع میسر ہوں۔

مزید : کراچی صفحہ اول