اس بس ڈرائیور کی زبان جسم کے کس حصے تک پہنچ جاتی ہے؟ دیکھ کر لوگوں کی آنکھیں کھلی کی کھلی رہ گئیں

اس بس ڈرائیور کی زبان جسم کے کس حصے تک پہنچ جاتی ہے؟ دیکھ کر لوگوں کی آنکھیں ...
اس بس ڈرائیور کی زبان جسم کے کس حصے تک پہنچ جاتی ہے؟ دیکھ کر لوگوں کی آنکھیں کھلی کی کھلی رہ گئیں

  

کٹھمنڈو(مانیٹرنگ ڈیسک) بعض لوگ آپ نے دیکھے ہوں گے جو اپنی زبان سے ناک کو چھو لیتے ہیں لیکن آپ یہ سن کر دنگ رہ جائیں گے کہ نیپال میں ایک شخص کی زبان اتنی لمبی ہے کہ وہ اس سے اپنے ماتھے کو بھی چھو لیتا ہے۔ نیپال کے شہر اولابری کے رہائشی اس شخص کا نام یاگیا بہادر کاتوال ہے جو ایک سکول کی بس چلاتا ہے۔ اس کا دعویٰ ہے کہ اس کی زبان دنیا میں سب سے زیادہ لمبی ہے اور وہ دنیا کا واحد شخص ہے جو زبان سے اپنے ماتھے کو چھو سکتا ہے۔

یاگیا کا کہنا ہے کہ ”میں کبھی بھی سکول کے بچوں کے ساتھ یہ کام نہیں کرتا کیونکہ ایسا کرتے ہوئے میری شکل انتہائی خوفناک ہو جاتی ہے اور بچے ڈر جاتے ہیں۔مجھے سکول کی طرف سے بھی وارننگ دی گئی ہے کہ بچوں کے سامنے یہ کام نہ کروں۔ اگر مجھے کسی ہارر مووی میں کام کا موقع ملے تو مجھے میک اپ کی بھی ضرورت نہیں ہو گی۔“ رپورٹ کے مطابق یاگیا زبان سے ماتھے کو چھونے کے علاوہ اپنے ہونٹوں سے ناک کو ڈھانپ لینے کی صلاحیت بھی رکھتا ہے اور منہ سے رائل انفیلڈ کی بلیٹ موٹرسائیکل کا ساﺅنڈ بھی نکال سکتا ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ویڈیو دیکھیں۔۔۔۔۔۔۔۔۔

مزید : ڈیلی بائیٹس