رواں برس کراچی میں شہریوں سے کتنے ہزار موبائل فون چھینے گئے ،جان کر ہی پسینے چھوٹ جائیں گے 

رواں برس کراچی میں شہریوں سے کتنے ہزار موبائل فون چھینے گئے ،جان کر ہی پسینے ...
رواں برس کراچی میں شہریوں سے کتنے ہزار موبائل فون چھینے گئے ،جان کر ہی پسینے چھوٹ جائیں گے 

  

کراچی(ڈیلی پاکستان آن لائن)شہر قائد میں سٹریٹ کرائم کی وارداتوں میں اضافہ دیکھنے میں آیا ہے جبکہ حکومت کی امن و امان برقرار رکھنے کی تمام کوششوں کے باوجود ڈاکو کراچی میں دندنا رہے ہیں تاہم جرائم کی دیگر سنگین وارداتوں دہشت  گردی اور ٹارگٹ کلنگ میں ماضی کے مقابلے میں کمی دیکھنے میں آ ئی ہے  لیکن رواں برس کراچی میں شہریوں سے کتنے ہزار موبائل فون چھینے گئے ،جان کر ہی پسینے چھوٹ جائیں گے ۔

تفصیلات کے مطابق نجی ٹی وی کی ایک رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ وزیر اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ کی زیر صدارت امن و امان سے متعلق اجلاس میں آئی جی سندھ نے اس حوالے سے بریفنگ دیتے ہوئے کہا کہ رواں برس کراچی کے شہری 14 ہزار سے زائد موبائل فونز سے محروم ہوئے ہیں۔ ترجمان وزیر اعلیٰ سندھ کے مطابق آئی جی سندھ کلیم امام نے بتایا کہ 2013ء میں ٹارگٹ کلنگ کے 575 اور اس سال صرف 6 واقعات ہوئے جبکہ رواں برس ٹارگٹ کلنگ میں ایک پولیس اہلکار کو شہید کیا گیا تھا۔آئی جی سندھ ڈاکٹر کلیم امام نے سٹریٹ کرائم کے حوالے سے بتایا کہ موبائل فون چھیننے کے واقعات میں اضافہ ہوا ہے، اس سال 14 ہزار51 موبائل فون چھینے گئے تاہم لوگ اب موبائل چھننے کی شکایت درج کرانے لگے ہیں جبکہ پہلے تو شہری موبائل چھین جانے کی رپورٹ درج کرانے سے ہی کتراتے تھا لیکن اب ایسا نہیں ہے ۔آئی جی سندھ کے مطابق موٹر سائیکل اور کار چھننے کے واقعات میں کمی دیکھنے میں آئی ہے،رواں برس 1892 موٹرسائیکلیں اور 165 کاریں چھیننے کے مقدمات درج ہوئے ۔ اس موقع پر وزیراعلیٰ سندھ نے کہا کہ عوام کے جان و مال کی ذمداری حکومت کی ہے، گاڑیاں چھیننے اور سٹریٹ کرائم کو ہرصورت کنٹرول کیا جائے ۔

مزید : علاقائی /سندھ /کراچی