اداروں کی نیچادکھانے کی کوشش پر حکومت اور فوج میں اختلافات شروع ہوسکتے ہیں:میجر جنرل (ر)اعجاز اعوان

اداروں کی نیچادکھانے کی کوشش پر حکومت اور فوج میں اختلافات شروع ہوسکتے ...
اداروں کی نیچادکھانے کی کوشش پر حکومت اور فوج میں اختلافات شروع ہوسکتے ہیں:میجر جنرل (ر)اعجاز اعوان

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) دفاعی تجزیہ کار میجر جنرل (ر ) اعجاز اعوان نے کہا ہے کہ تحریک انصاف کی حکومت نے بھی اداروں کو نیچا دکھانے کی کوشش کی تو ہوسکتا ہے کہ تحریک انصاف کی حکومت کے ساتھ بھی فوج کے اختلافات شروع ہوجائیں۔

اے آروائی نیوز کے پروگرام ”آف دی ریکارڈ “ میں گفتگو کرتے ہوئے میجر جنرل (ر)اعجاز اعوان نے کہا کہ اگر تحریک انصا ف کی حکومت بھی ادار وں کونیچا دکھانے کی کوشش کرے گی تو ہوسکتاہے کہ اس حکومت کے ساتھ بھی فوج کے اختلافات شروع ہوجائیں کیونکہ فوج ہمیشہ اس وقت تک حکومت کے ساتھ کھڑی رہی ہے جب تک فوج کونیچا دکھانے کی کوشش نہیں کی گئی ۔

انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم عمران خان جو کہہ رہے ہیں کہ میری ترجیح مشرف کیس کی پیروی نہیں ہے تو اپنی ترجیح کا تعین تو وہ خود ہی کریں گے کہ پہلے حکومت نے لوٹ مار کرنے والوں کا احتساب کرنا یا کچھ اور کرناہے ۔ ان کا کہنا تھا کہ عمران خان کو ئی غیر معمولی فائدہ لینے کی کوشش نہیں کررہے اور فوج کسی کے سیاسی منشور کے ساتھ نہیں کھڑی ، فوج کبھی کوئی اپنا الگ ایجنڈا لیکر نہیں آتی ، اس سے قبل جب نواز شریف الیکشن جیت گئے تھے تو الزام فوج پر لگایا گیا، اور اس سے قبل جب پیپلز پارٹی کی حکومت بنی تو پھر بھی الزام فوج پر ہی لگایا گیا تھا ۔

مزید : قومی