موجودہ حکمران مہنگائی روکنے میں بے بس ہیں،شاداب رضا

      موجودہ حکمران مہنگائی روکنے میں بے بس ہیں،شاداب رضا

  



لاہور(نمائندہ خصوصی) پاکستان سنی تحریک کے مرکزی رہنماء محمد شاداب رضا نقشبندی نے کہا ہے کہ مہنگائی اور بے روزگاری میں اضافہ غربت مٹاؤ کی جگہ غریب مٹاؤ پالیسی کا شاخسانہ ہے،مہنگائی کو روکنے میں حکمران بے بس ہیں، ملک کو سیاسی ومعاشی طور پر مستحکم بنانے کیلئے بیرونی پالیسیوں کو مسترد کرنا ہوگا،حکومت سستی بجلی فراہم کرنے کا وعدہ پورا کرئے،اتحاد ویکجہتی سے بڑی سے بڑی قوت کا مقابلہ کیا جاسکتا ہے،سیاسی شعور اجاگر کرنے کی ضرورت ہے،ہمارا مقابلہ عوام دشمن پالیسیوں سے ہے،عوامی مسائل کے حل کیلئے ملک میں نظام مصطفی کے نفاذ کی جدوجہد جاری رکھیں گے،عوام کو بنیادی حقوق سے محروم کرنے کی روش ختم نہیں ہوئی تو مایوسیاں جنم لیگی،عوام کو سستا راشن،سستی بجلی،امن اور تفریح گاہ مہیا کرنا حکومت کا آئینی فرض ہے،حکومت عوام کو اچھی تعلیم،صحت،روزگاراور گھر فراہم کرنے کیلئے اولین بنیادوں پر کام کرئے، انہوں نے کہا کہ غربت کے خاتمے کیلئے کسی بھی حکومت نے خاطر خواہ اقدامات نہیں کئے ہر دور میں مہنگائی آسمان کو چھوتی رہی اور آج مہنگائی کا طوفان سر اٹھا رہا ہے،ایک طرف بے روز گاری دوسری طرف بڑھتی ہوئی مہنگائی نے غریب سے آخری نوالہ تک چھین لیا، کہا کہ حکومت غریبوں کو ریلیف فراہم کرنے کیلئے ہر ممکن اقدامات کرئے، غربت کو ختم کئے بغیر دہشتگردی کے ناسور کا مکمل خاتمہ ممکن نہیں ہے،انہوں نے کہا کہ غریب عوام کیلئے تعلیم،اسپتالوں میں مفت یا سستا علاج اور غریبوں کو اجناس مہیا کرنا حکومت اپنی ترجیحات میں شامل کرئے،جمہوری معاشروں میں عوام کو بنیادی حقوق کے ساتھ مکمل سماجی تحفظ بھی فراہم کیا جاتا ہے،پاکستان میں سماجی تحفظ کا اب تک کوئی موثر نظام موجودنہیں جس کی وجہ سے معاشرے میں عدم استحکام کا احساس عام ہورہا ہے،جمہوریت مایوسیوں کو ختم خوشحالی وترقی کو پروان چڑھاتی ہے مگر اس کے برعکس عوام آج بھی بے روزگاری و مہنگائی کا شکار ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1