ساؤتھ پنجاب ورکرز فیڈریشن آف ٹریڈیونینز کااجلاس، رخسانہ انور کیخلاف کارروائیو ں کی مذمت

ساؤتھ پنجاب ورکرز فیڈریشن آف ٹریڈیونینز کااجلاس، رخسانہ انور کیخلاف ...

  



ملتان (خبر نگار خصو صی) ساوتھ پنجاب ورکرز فیڈریشن آف ٹریڈ یونینز کا اجلاس زیر صدارت مہر اشرف ساقی منعقد ہوا جسمیں مہمان خصوصی میڈم رخسانہ انور صوبائی صدر نیشنل پروگرام (بقیہ نمبر40صفحہ7پر)

ہیلتھ ایمپلائز ایسوسی ایشن پنجاب تھیں۔ اجلاس میں رخسانہ انور کے خلاف انتقامی کاروائیوں پر شدید مذمت کی گئی میڈم رخسانہ انور اور ان کی تین دیگر ساتھیوں کیخلاف انتقامی کارروائی کرتے ہوئے ملازمت سے برخا ست کرنے پر شدید مذمت کرتے ہوئے سیکرٹری ہیلتھ سے مطالبہ کیا کہ وہ فوری طور پر بحال کریں۔ اجلاس میں ساؤتھ پنجاب سے تعلق رکھنے والی تمام مزدور یونینز نے فیصلہ کیا ہے کہ اگر انتظامیہ نے میڈم رخسانہ انور کو ملازمت پر بحال نہ کیا تو احتجاجی تحریک شروع کی جائے گی۔ اور انتقامی کاروائیوں کے خلاف بھرپور جدوجہد کی جائے گی۔ اس حوالے سے فیصلہ کیا گیا کہ وزیر اعظم، وزیر اعلیٰ پنجاب، گورنر پنجاب، چیف سیکرٹری پنجاب اور سیکرٹری ہیلتھ کو حالات سے ا?گاہ کیا جائے۔ ان انتقامی کارروائیوں کے خلاف پریس ریلیز، پریس کانفرنسز اور احتجاج کا پروگرام ترتیب دیا گیا۔ رائے محمد حنیف، ملک رمضان نے کہا کہ رخسانہ انور کے خلاف کی جانے والی انتقامی کارروائیوں کو فوری بند کرتے ہوئے ملازمت پر بحال کیا جائے۔انہوں نے کہا ہم ہر حوالے سے ساتھ ہیں۔ ملک محمد اصغر ڈوگر، جنرل سیکرٹری ویسٹ منیجمنٹ ، شیخ شاہد صدر سمال انڈسٹریز، دلاور صدیقی صدر ساؤتھ پنجاب ورکرز فیڈریشن، یونس جاوید انصاری، پالور لومز ورکز یونین، مصور نقوی صدر لیبر یونین ملتان نے کہا کہ حکومت مراعات اور حقوق دینے کی بجائے جو لوگ ورکرز کے حقوق کیلئے جدوجہد کر رہے ہیں ان کے خلاف انتقامی کارروائیوں میں مصروف ہے۔ مشترکہ طور پر مطالبہ کیا کہ فوری طور پر رخسانہ انور کو بحال کیا جائے۔ اشرف ساقی نے کہا کہ اگر حکومت نے رخسانہ انور کو ملازمت پر بحال نہ کیا تو بھرپور جدوجہد کی جائے گی اور جو بھی حالات ہوئے حکومت کی ذمہ داری ہو گی۔ حکومت ہوش کے ناخن لے اور مزدور رہنماؤں کے خلاف انتقامی کارروائیاں بند کرے#

مزید : ملتان صفحہ آخر