وفاقی کابینہ، 10نکاتی ایجنڈا منظور، آرمی چیف کی ملاقات کی مدت ملازمت، چیف الیکشن کمشنر، ارکان کے تقرر پر مشاورت

  وفاقی کابینہ، 10نکاتی ایجنڈا منظور، آرمی چیف کی ملاقات کی مدت ملازمت، چیف ...

  



اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک،نیوزایجنسیاں) وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت وفاقی کابینہ اجلاس، آرمی چیف کی مدت ملازمت میں توسیع کیلئے قانون سازی سمیت چیف الیکشن کمشنر اور الیکشن کمیشن کے ا رکان کی تقرری پر مشاورت کی گئی کابینہ نے 10 نکاتی ایجنڈے کی منظوری دیدی، اقتصادی رابطہ کمیٹی (ای سی سی) کے فیصلوں کی توثیق کی گئی،خواتین کے وراثتی حقوق سے متعلق ایکٹ میں ترمیم اور ویمن پراپرٹی رائٹس ایکٹ میں ترامیم منظور،واپڈا کے ممبر پاور، ممبر واٹر، چیئرمین اکادمی ادبیات،چیف ایگزیکٹو آفیسر انشورنس کمپنی کی تقرریوں،کابینہ نے آزاد جموں وکشمیر کے مالی سال 2019-20ء کے پراپرٹی بجٹ، اسلام آباد میں کم سن بچوں کی عدالتوں کے قیام اور خواتین پراپرٹی حقوق آرڈیننس 2019ء کے نفاذ میں ترمیم کی بھی منظوری دی۔اجلاس میں وفاقی کابینہ کو پاکستان کی معاشی صورتحال میں بہتری پر بریفنگ دی گئی،جس کے بعد وزیراعظم اور کابینہ نے عالمی معاشی درجہ میں بہتری پر معاشی ٹیم کو شاباش دی اس موقع پر وزیراعظم کا کہنا تھا کہ معاشی ٹیم نے ملکی معیشت کا رخ موڑ دیا، بہت مطمئن ہوں، قوم کو معاشی میدان میں مزید خوشخبریاں ملیں گی  اس موقع پر وزیراعظم عمران خان نے موڈیز کی رپورٹ کا معاملہ عوام میں اٹھانے کی بھی ہدایت کی وفاقی کابینہ کو چیف الیکشن کمشنر اور الیکشن کمیشن ممبران کی تقرری پر بھی بریفنگ دی گئی۔کابینہ نے اقتصادی رابطہ کمیٹی اور کمیٹی برائے نجکاری کے فیصلوں کی بھی توثیق کردی۔ نجی ٹی وی کے مطابق کابینہ میں سیکیورٹی پرنٹنگ کارپوریشن، سیکیورٹی پیپرز لمیٹڈ اور لازمی سروسز ایکٹ میں ترمیم کا جائزہ لیا گیا۔وزیراعظم کے زیر صدارت وفاقی کابینہ اجلاس میں کارکے رینٹل منصوبے کا سیٹلمنٹ معاہدہ پیش کیا گیا۔ وفاقی کابینہ کو بتایا گیا کہ ترک صدر طیب اردوان کی مداخلت سے پاکستان پر عائد 1.2ارب کا جرمانہ ختم ہوا۔ کابینہ کو بتایا گیا کہ کارکے رینٹل کیس میں ملوث پاکستانی افسران نے اعتراف جرم کر لیا ہے۔ سابق وفاقی وزیر اور سیکریٹری کے خلاف کارروائی کی جائے گی۔معاہدے کے مطابق کارکے کیس میں ملوث غیر ملکیوں کے خلاف کارروائی نہیں ہوگی۔ 

وفاقی کابینہ 

مزید : صفحہ اول