گرفتار ملازمین رہا، مقدمے خارج نہ ہوئے تو پنجاب بھر کے ہسپتال بند کردینگے 

گرفتار ملازمین رہا، مقدمے خارج نہ ہوئے تو پنجاب بھر کے ہسپتال بند کردینگے 

  



لاہور(جنرل رپورٹر) گرینڈ ہیلتھ الائنس نے پنجاب حکومت کو وکلاء تشدد میں گرفتار کئے گئے پنجاب انسٹیٹیوٹ آف کارڈیالوجی کے دو سکیورٹی گارڈز کی رہائی اور مقدمہ خارج کرنے کے لئے دو دن کی ڈیڈ لائن دے دی ہے اور اعلان کیا ہے کہ مطالبہ پورا نہ ہوا تو پی آئی سی سمیت پورے پنجاب کے ہسپتال بند کر دیں گے اس حوالے سے گزشتہ روز پریس کانفرنس کرتے ہوئے جی ایچ اے کے چیئرمین ڈاکٹر حبیب سلیمان اور ڈاکٹر حامد بٹ نے کہا کہ وکلاء کی مذمت کرتے ہیں وکلاء نے پی آئی سی کے آؤٹ ڈور پر دھاوا بولا اور ڈاکٹروں سمیت ملازمین کو تشدد کا نشانہ بنایا اور اوپر سے ہمارے خلاف دہشتگردی کی سنگین دفعات پر مبنی مقدمہ بھی درج کرا دیا اور گزشتہ روز بیگناہ دو سکیورٹی گارڈز کو گرفتار کرا دیا جس کی ہم مذمت کرتے ہیں ہم حکومت پنجاب اور خصوصاً وزیر صحت یاسمین راشد سے مطالبہ کرتے ہیں کہ اگر گرفتار ملازمین کو دو دن کے اندر اندر رہا نہ کیا گیا مقدمات خارج نہ ہوئے تو پورے پنجاب کے ہسپتالوں میں ہڑتال ہو گی اور آڈٹ ڈور بند کر دینگے۔

گرینڈ ہیلتھ الائنس

مزید : صفحہ اول