بونیر،پرائمری ٹیچرز ایسوسی ایشن کا مطالبات کے حل کیلئے مظاہرہ

بونیر،پرائمری ٹیچرز ایسوسی ایشن کا مطالبات کے حل کیلئے مظاہرہ

  



بونیر(ڈسٹرکٹ رپورٹر)تنگ امد بہ جنگ کے مصداق اخر کار اساتذہ تنظیموں نے پرائمری ٹیچرز ایسوسی ایشن کی قیادت میں محکمہ تعلیم میں سیاسی مداخلت پانچ ماہ سے ڈی او میل فی میل اور ایس ڈی او ز کی خالی اسامیوں کے خلاف ڈسٹرکٹ سیکرٹریٹ ڈگر سے بونیر پریس کلب تک احتجاجی مظاہرہ کیا۔مظاہرین اساتذہ نے حکومت کے خلاف اور اپنے مسائل کے بارے میں پلے کارڈز اٹھارکھے تھے۔اساتذہ مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے ایپٹا کے صدر اکبر علی باچا۔صوبائی ایڈیشنل جنرل سیکرٹری معراج علی شاہ۔نورکمال شاہ۔خورشید اور دیگرمقررین نے کہا کہ موجودہ حکومت کی غلط پالیسیوں کی وجہ سے بونیر میں تعلیمی نظام تباہی کے دہانے پر پہنچ چکی ہے۔صوبہ میں رینکنگ کے لخاظ سے بونیر دوسری نمبر سے 39 ویں نمبر پر اگیاہے۔انہوں نے کہا کہ پی ٹی ائی سے تعلق رکھنے والے غیر منتحب افراد محکمہ تعلیم کے افسران پر ناجائز کام کروارہے ہیں۔جس کی وجہ سے کوئی افسر بونیر میں ڈیوٹی کرنے کو تیار نہیں ہے۔انہوں نے کہا کہ نئے اساتذہ کی تنحواہوں سمیت پروموشن اور دیگر مسائل حل نہیں ہورہے ہیں۔ایپٹا کے صدر نے ڈپٹی کمشنر بونیر سمیت ضلع کے اہم افسران سے مطالبہ کیاکہ اگر اس ماہ کے 11 تاریح تک اساتذہ کو درپیش مسائل حل نہ کئے گئے تو بارہ دسمبر تک بونیر کے تمام پرائمری سکولوں کو تالے لگاکر بندکردیں گے۔اور ہزاروں کی تعداد میں اساتذہ ڈسٹرکٹ سیکرٹریٹ ڈگر میں مطالبات کے حل تک احتجاج کریں گے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر