’وزیر اعلیٰ پنجاب شریف آدمی ، وہ یہ کام نہیں کرسکتے ‘سردار لطیف کھوسہ نے واضح کردیا

’وزیر اعلیٰ پنجاب شریف آدمی ، وہ یہ کام نہیں کرسکتے ‘سردار لطیف کھوسہ نے ...
’وزیر اعلیٰ پنجاب شریف آدمی ، وہ یہ کام نہیں کرسکتے ‘سردار لطیف کھوسہ نے واضح کردیا

  



اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن)پاکستان  پیپلز پارٹی کےرہنمااورسابق گورنر پنجاب سردار لطیف کھوسہ نے کہاہے کہ سردار عثمان بزدار اِتنے بڑے صوبے کی وزارت اعلیٰ کیلئے تیار نہیں تھے ، وہ شریف آدمی ہیں اوریہ کا م اُن کی بساط سے بھاری ہے ۔

جیونیوز کے پروگرام ”کیپٹل ٹاک“میں گفتگو کرتے ہوئے لطیف کھوسہ نے کہا کہ انسان کا بنایا ہوا کوئی بھی قانون مکمل طور پر صحیح نہیں ہوسکتا ، یہ کوئی اللہ تعالی کا بنایا ہوا ضابطہ تونہیں ہوتا،اس لئےتو آئین میں ترمیم کا اختیاردیاہواہے۔اُنہوں نے کہا کہ اٹھارویں ترمیم میں صوبائی خود مختاری کوبحال کیاگیا،اٹھارویں ترمیم کی اچھائیاں اپنی جگہ ہیں لیکن اگر کوئی چیز ایسی رونما ہوتی ہے تو خامی دور کی جاسکتی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ یہ تو توقع ہی نہیں تھی کہ ایک ایسا وزیر اعظم آئے گا جو کنٹینر سے نیچے ہی نہیں اترے گا ۔انہوں نے کہاکہ یہ اس ملک کا ایک بڑا المیہ ہے کہ چیئر مین سینیٹ کے الیکشن میں 64بندوں نے ووٹ ڈالے لیکن ووٹ صرف 50نکلے ہیں۔

سردارلطیف کھوسہ کاکہنا تھا کہ میں نہیں سمجھتا کہ سردار عثمان بزدار اتنے بڑے صوبے کی وزارت اعلیٰ کیلئے تیار تھے ، عثمان بزدار شریف آدمی ہیں اوریہ کام ان کی بساط سے بھاری ہے ۔ انہوں نے کہا کہ تحریک انصاف نے بڑے نعرے مارے تھے کہ ہم کے پی کا ماڈل لیکر آئیں گے اور پنجاب پولیس کوٹھیک کردیں گے لیکن جس طرح بیورو کریسی کوشٹل کاک بنایا جارہاہے تو ایسے ہی ہوناہے جس طرح ہورہاہے ۔

مزید : قومی