ڈونلڈ ٹرمپ کی بیٹی ایوانکا ٹرمپ بڑی مصیبت میں پھنس گئیں

ڈونلڈ ٹرمپ کی بیٹی ایوانکا ٹرمپ بڑی مصیبت میں پھنس گئیں
ڈونلڈ ٹرمپ کی بیٹی ایوانکا ٹرمپ بڑی مصیبت میں پھنس گئیں

  

نیویارک(ڈیلی پاکستان آن لائن) ڈونلڈ ٹرمپ کی بیٹی ایوانکا ٹرمپ پر ٹیکس سے مستثنیٰ غیر منافع بخش تنظیم کے فنڈز کے استعمال کا الزام ہے، متعلقہ اداروں کی جانب سے ایوانکا سے 5 گھنٹے پوچھ گچھ  کی گئی۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق ایوانکا ٹرمپ پرالزام ڈسٹرکٹ آف کولمبیا کے اٹارنی جنرل کارل ریسائن کی جانب سے عائد کیا گیا ہے اور کہا گیا ہے کہ ٹیکس سے مستثنیٰ غیر منافع بخش تنظیم کے فنڈز کا استعمال ٹرمپ کے رئیل اسٹیٹ کے کاروبار اور دیگر کمپنیوں کو فائدہ پہنچانے کیلئے کیا گیا۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق ایوانکا ٹرمپ پر الزام ہے کہ انہوں نے 2017 میں ڈونلڈ ٹرمپ کی تقریب حلف برداری کیلئے ہوٹل کو زیادہ پیسے ادا کیے۔یہ الزام بھی عائد کیا گیا ہے کہ 2017 میں ڈونلڈ ٹرمپ کی تقریب حلف برداری کیلئے ڈونلڈ ٹرمپ کے واشنگٹن کے ہوٹل کو مارکیٹ ریٹ سے زیادہ ادائیگی کی گئی۔

ایوانکا ٹرمپ نے ان الزامات کو مسترد کرتے ہوئے سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر جاری بیان میں ایوانکا ٹرمپ نے کہا ہے کہ امریکی عوام کے ٹیکس کا پیسہ ضائع کیا جارہا ہے۔

ایوانکا نے 2017 میں لکھی گئی ای میل کا اسکرین شاٹ بھی جاری کیا جس میں انہوں نے ہوٹل انتظامیہ سے درخواست کی تھی کہ وہ مارکیٹ ریٹ سے مناسب معاوضہ کریں۔

مزید :

بین الاقوامی -