پی آئی سی سکینڈل ، ادویہ ساز کمپنی کے مالک کا قانونی تقاضے پورے کیے بغیر جسمانی ریمانڈ دینے پر جوڈیشل مجسٹریٹ کو شوکا زنوٹس جاری

پی آئی سی سکینڈل ، ادویہ ساز کمپنی کے مالک کا قانونی تقاضے پورے کیے بغیر ...
پی آئی سی سکینڈل ، ادویہ ساز کمپنی کے مالک کا قانونی تقاضے پورے کیے بغیر جسمانی ریمانڈ دینے پر جوڈیشل مجسٹریٹ کو شوکا زنوٹس جاری

  

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک) سپریم کورٹ نے پی آئی سی کیس میں ادویہ سازکمپنی کے مالک نادر فروزکا قانونی تقاضے پورے کیے بغیر جسمانی ریمانڈ دینے پر جوڈیشل مجسٹریٹ کواظہار وجودہ کا نوٹس جاری کردیا۔جسٹس تصدق جیلانی کی سربراہی میں سپریم کورٹ کے تین رکنی بنچ نے سپریم کورٹ رجسٹری لاہور میں کیس کی سماعت شروع کی تو عدالت کے روبرو نادرعلی نے بتایاکہ سیشن جج کو اپنے اپنے بیانات قلمبند کروادیے تھے۔ جسٹس ثاقب نثار نے سیشن جج کی رپورٹ عدالت میں پیش کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے نادر علی کا جسمانی ریمانڈ دینے پر جوڈیشل مجسٹریٹ عامرنذیراعوان سے استفسار کیاکہ جب آپ نے جسمانی ریمانڈ دیا تو اپنے ملزم کا بیان کیوں قلمبند نہیں کیا؟ کیا بطور جج آپ کا یہ فرض نہیں تھا کہ ملزم سے بیان لیتے کہ اغوا کے وقت اسے کہاں رکھا گیا؟ فاضل بنچ نے جوڈیشل مجسٹریٹ کو اظہار وجوہ کا نوٹس جاری کرتے ہوئے سماعت ایک ہفتے تک ملتوی کردی۔

مزید : لاہور