موجودہ اور سابقہ حکومتیں پی آئی اے کے خسارے کی ذمہ دار ہیں: سیاسی و مذہبی رہنما

موجودہ اور سابقہ حکومتیں پی آئی اے کے خسارے کی ذمہ دار ہیں: سیاسی و مذہبی ...

لاہور(جاوید اقبال،محمد نواز سنگرا،شہزاد ملک)مختلف سیاسی اور مذہبی جماعتوں کے راہنماؤں نے کہا ہے کہ پی آئی اے کے خسارے اور بحرانوں کے ذمہ دار حکومت اور اپوزیشن سمیت ماضی میں برسر اقتدار رہنے والی حکومتیں ہیں جن میں سے ہر ایک نے بھی پی آئی اے کی تباہ کاری میں حصہ ڈالا ۔اگر پی آئی اے لا علاج ہے تو اس کا حل گولی اور لاٹھی سے نہ کیا جائے۔خدانخواستہ اگر کل کو ملک خسارے میں گیا تو اس کو بھی ٹھیکے پر دے دیا جائے گا،وہ گزشتہ روز پاکستان فورم میں اظہار خیال کر رہے تھے۔اس حوالے سے مختلف راہنماؤں نے کہا کہ پی آئی اے کے نہتے ملازمین پر گولیاں برسانا اور قتل عام کرنا جمہوری روایات کے منافی ہے اس کی مزمت کرتے ہیں اور معاملے کی جوڈیشل انکوائری کرائی جائے اور جس نے گولی چلانے کا حکم دیا اس کے خلاف کارروائی کی جائے۔اس سلسلے میں گفتگو کرتے ہوئے تحریک انصاف کے سیکرٹری جنرل جہانگیر ترین نے کہا کہ جمہوری دور حکومت میں ہر کسی کو اظہار رائے کی آزادی ہوتی ہے،بڑے سے بڑے ڈکٹیٹر کے دور میں بھی اپنے حقوق کیلئے جدوجہد کرنے والوں پر گولی چلا کر انہیں قتل نہیں کیا گیا،کراچی میں حکومت نے پی آئی اے ملازمین پر گولیاں برسا کر بربریت کا مظاہرہ کیا ہے۔انہوں نے کہا کہ پی آئی اے کے خسارے اور تباہی میں مسلم لیگ(ن)اور پیپلز پارٹی برابر کی حصہ دار ہیں۔جوڈیشل انکوائری کر ا کر ذمہ دارں کو کٹہرے میں لایا جائے۔جماعت اسلامی کے سیکرٹری جنرل لیاقت بلوچ نے کہا کہ حکومت بتائے کہ قومی اداروں کو فروخت کرنا کہاں کا انصاف ہے اگر جسم کا کوئی حصہ بیمار ہو تو اسے کاٹ نہیں دیا جاتا اس کا علاج کیا جاتا ہے ،کل کو ملک خسارے میں ہوا تو حکومت اسے بھی ٹھیکہ پر دے دے گی۔مسلم لیگ(ق )کے رہنما کامل علی آغانے کہا کہ کراچی میں پی آئی اے کے نہتے ملازمین پر گولیاں چلا کر حکومت نے بد ترین ڈکٹیٹر کا کردار ادا کیا ہے۔مسلم لیگ(ن)کی حکومت جب بھی اقتدار میں آتی ہے تو قومی اداروں کی فروخت اس کا مشن ہوتا ہے جو اپنے فرنٹ مینوں کے ذرایعے خریدتی ہے۔مسلم لیگ(ن)کے چئیرمین راجہ ظفر الحق نے کہا کہ پی آئی اے کو خسارے اور بحرانوں سے نکالنے کیلئے محفوظ حکمت عملی کے تحت کام کر رہی ہے ۔کچھ سیاسی جماعتیں سیاست چمکا رہی ہیں اگر ادارے کو پرائیویٹ بھی کیا گیا تو کسی ملازم کو نوکری سے نہیں نکالا جائے گا۔پیپلز پارٹی کے سیکرٹری جنرل لطیف کھوسہ نے کہا کہ پی آئی اے کی نجکاری اور ملازمین کو قتل کرنا بہت بڑا ظلم ہے جس کو قوم معاف نہیں کرے گی۔پی آئی اے کی نجکاری حکومت کو لے ڈوبے گی کیونکہ ظلم کا نظام نہیں چل سکتا اور قوم ظالموں سے انتقام ضرور لے گی۔پی آئی اے کی نجکاری حکومت کی بہت بڑی غلطی ہے۔

مزید : صفحہ آخر