انوپم کھیر نے پاکستان آنے سے انکار کردیا،4 فریقی افغان امن مذاکرات 6 فروری کو اسلام آباد میں ہونگے: ترجمان دفتر خارجہ

انوپم کھیر نے پاکستان آنے سے انکار کردیا،4 فریقی افغان امن مذاکرات 6 فروری کو ...
انوپم کھیر نے پاکستان آنے سے انکار کردیا،4 فریقی افغان امن مذاکرات 6 فروری کو اسلام آباد میں ہونگے: ترجمان دفتر خارجہ

  

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) ترجمان دفتر خاجرجہ قاضی خلیل اللہ نے کہا ہے کہ بھارتی اداکار انوپم کھیر نے پاکستان میں ہونے والے میلے میں شرکت سے انکار کردیا ہے،بھارتی صدر کے بابری مسجد سے متعلق بیان کا خیر مقدم کرتے ہیں، 4 فریقی افغان امن مذاکرات 6 فروری کو اسلام آباد میں ہونگے۔

ہفتہ وار میڈیا بریفنگ دیتے ہوئے ترجمان دفتر خارجہ کا کہنا تھا کہ بھارتی اداکار انوپم کھیر کے ویزے کا مسئلہ حل کردیا گیا ہے ، نئی دلی میں پاکستانی ہائی کمشن نے ان سے رابطہ کیا ہے تاہم انہوںنے پاکستان آنے سے انکار کردیا ہے۔داو¿د ابراہیم پاکستان میں موجود نہیں ہے اور نہ یہاں اس کا کوئی رہائشی پتا ہے جبکہ بھارتی حکام خود اس بات کا اعتراف بھی کرچکے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ پاک بھارت مذاکرات کیلئے ابھی حتمی تاریخ طے نہیں ہوئی افغانستا ن کے حوالے سے 4 ملکی امن مذاکرات 6 فروری کو اسلام آباد میں ہونگے۔ڈھاکہ میں پاکستانی ہائی کمشنر کوملاقات کیلئے بلایا گیا تھا جس میں دو طرفہ تعلقات پر گفتگو ہوئی ہے پاکستان بنگلہ دیش کے ساتھ برادرانہ اور دوستانہ تعلقات چاہتا ہے۔

سانحہ باچاخان یونیورسٹی کے حوالے سے قاضی خلیل اللہ کا کہنا تھا کہ چارسدہ واقعہ میںافغان سرزمین استعمال ہوئی اور اس حوالے سے افغان حکومت سے رابطے میں ہیں،آپریشن ضرب عضب بغیر کسی تفریق کے جاری ہے، بھارت کشمیریوں پر مظالم ڈھارہا ہے مسئلہ کشمیر کا حل اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق چاہتے ہیں۔پاکستان نے مداخلت کی ہمیشہ مذمت کی ہے اوربھارتی مداخلت کے ثبوت اقوام متحدہ کو دے دیے ہیں۔

مزید : قومی /اہم خبریں