وہ ٹیمیں جو اب تک سب سے زیادہ ٹی 20 انٹرنیشنل میچ جیت چکی ہیں، پاکستان کا نمبر دیکھ کر آپ خوش ہو جائیں گے

وہ ٹیمیں جو اب تک سب سے زیادہ ٹی 20 انٹرنیشنل میچ جیت چکی ہیں، پاکستان کا نمبر ...
وہ ٹیمیں جو اب تک سب سے زیادہ ٹی 20 انٹرنیشنل میچ جیت چکی ہیں، پاکستان کا نمبر دیکھ کر آپ خوش ہو جائیں گے

  

لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک) کرکٹ کے کھیل میں ٹی 20 فارمیٹ اتنی تیزی سے مقبول ہوا کہ جلد ہی آئی سی سی نے اس فارمیٹ کا ورلڈکپ کرانا بھی شروع کر دیا جس کے بعد مختلف ممالک کی کرکٹ لیگز بھی ٹی 20 فارمیٹ میں تبدیل ہو گئیں اور تو اور اس سال آئی سی سی کی نگرانی میں ہونے والا ایشیاءکپ بھی ٹی 20 فارمیٹ میں تبدیل کر دیا گیا ہے۔ دنیا کی ہر بڑی ٹیم اس فارمیٹ میں اپنے جوہر دکھا چکی ہے اور پاکستان، بھارت، انگلینڈ، سری لنکا اور ویسٹ انڈیز تو اس فارمیٹ کا عالمی کپ بھی جیت چکے ہیں۔ اس خبر میں ہم آپ کو ان 10 ٹیموں کے بارے میں بتا رہے ہیں جو اب تک سب سے زیادہ ٹی 20 انٹرنیشنل میچز جیت چکی ہیں۔

اس فہرست میں پہلے نمبر پر قومی ٹیم براجمان ہے جو اب تک 98 میچ کھیل چکی ہے جن میں سے 57 میں فتح نصیب ہوئی اور 38 میں شکست کا سامنا کرنا پڑا۔ پاکستان ٹیم نے ٹی 20 فارمیٹ میں سب سے زیادہ سکور 203 رنز پر پانچ کھلاڑی آﺅٹ ہے جو اس نے 2008ءمیں بنگلہ دیش کے خلاف کھیلے گئے میچ میں بنایا۔ اس کے علاوہ پاکستان 2009ءمیں انگلینڈ میں ہونے والا ٹی 20 ورلڈکپ بھی جیت چکا ہے اور 2007ءکے ورلڈکپ کا فائنل بھی کھیل چکا ہے جہاں سنسنی خیز مقابلے کے بعد بھارت کے ہاتھوں شکست ہوئی تھی۔

فہرست میں دوسرا نمبر جنوبی افریقہ کا ہے جو اب تک 82 میچز کھیل کر 49 جیت چکی ہے اور 32 میں اسے شکست کا سامنا کرنا پڑا ہے۔ جنوبی افریقہ کا ٹی 20 فارمیٹ میں سب سے زیادہ سکور پانچ وکٹوں کے نقصان پر 241 رنز بنا ہیں جو اس نے انگلینڈ کے خلاف سینچورین میں کھیلے گئے میچ بنائے تھے جبکہ اس نے کم سے کم سکور 2013ءمیں پاکستان کے خلاف بنایا تھا اور پوری ٹیم 100 رنز پر آﺅٹ ہو گئی تھی۔

اس فہرست میں تیسرا نمبر سری لنکا کا ہے جو اب تک 73 میچ کھیل کر 43 جیت چکی ہے اور 28 میچوں میں اسے شکست ہوئی ہے۔ سری لنکا 2014ءمیں سری لنکا میں ہونے والا ٹی 20 ورلڈکپ بھی اپنے نام کر چکی ہے جہاں اس نے فائنل میں بھارت کو شکست سے دوچار کیا تھا۔ سری لنکا کا اس فارمیٹ میں سب سے زیادہ سکور 260 رنز 6 کھلاڑی آﺅٹ ہے جو اس نے کینیا کے خلاف 2007ءکے ورلڈکپ میں بنایا تھا جبکہ یہ 2010ءمیں آسٹریلیا کے خلاف کم ترین سکور 87 پر بھی آﺅٹ ہو چکی ہے۔

اس فہرست میں چوتھا نمبر نیوزی لینڈ کا ہے جو اب تک 88 میچ کھیل کر 42 جیت چکی ہے اور 39 میں اسے شکست کا سامنا کرنا پڑا ہے۔ نیوزی لینڈ کا اس فارمیٹ میں سب سے زیادہ سکور 214 رنز 6 کھلاڑی آﺅٹ ہے جو اس نے 2010ءمیں آسٹریلیا کے خلاف کرائسٹ چرچ میں کھیلے گئے میچ میں بنایا تھا جبکہ اس کا کم سے کم سکور 60 ہے جو اس نے سری لنکا کے خلاف 2014ءکے ٹی 20 ورلڈکپ کے میچ میں بنایا تھا۔ نیوزی لینڈ کے بلے باز برینڈن میکالم ٹی 20 فارمیٹ میں ایک سے زیادہ سنچری بنانے کا ریکارڈ بھی اپنے پاس رکھتے ہیں۔

تینوں فارمیٹ میں خطرناک ترین ٹیم تصور کی جانے والی آسٹریلوی ٹیم کا اس فہرست میں پانچواں نمبر ہے جو اب تک 81 میچ کھیل کر 40 میں فتح اور 38 میں ہار چکی ہے۔ آسٹریلوی ٹیم کا اس فارمیٹ میں سب سے زیادہ سکور 248 رنز 6 کھلاڑی آﺅٹ ہے جو اس نے 2013ءمیں ساﺅتھمپٹن میں انگلینڈ کے خلاف کھیلے گئے میچ میں بنایا جبکہ 2005ءمیں یہ انگلینڈ ہی کے خلاف سب سے کم سکور 79 پر بھی آﺅٹ ہو چکی ہے۔ یہ میچ بھی ساﺅتھمپٹن میں ہی کھیلا گیا تھا۔

بانی کرکٹ انگلینڈ اس فہرست میں چھٹے نمبر پر آتا ہے جس نے اب تک 79 میچ کھیل کر 38 جیتے اور 36 میں شکست کا سامنا کرنا پڑا۔ انگلینڈ کا ٹی 20 فارمیٹ میں زیادہ سے زیادہ سکور 214رنز سات کھلاڑی آﺅٹ ہے جو اس نے 2013ءمیں نیوزی لینڈ کے خلاف آکلینڈ میں کھیلے گئے میچ میں بنایا تھا جبکہ اس کا کم سے کم سکور 80 ہے جو 2012ءکے ٹی 20 ورلڈکپ میں سری لنکا کے خلاف کولمبو میں کھیلے گئے میچ میں بنایا تھا۔ انگلینڈ 2012ءمیں کھیلے گئے ٹی 20 ورلڈکپ میں فاتح قرار پایا تھا۔

اس فہرست میں ساتواں نمبر ویسٹ انڈیز کا ہے جو 71 میچ کھیل کر 33 جیت چکا ہے اور 33 میچ ہی ہارا بھی ہے۔ ویسٹ انڈیز کا اس فارمیٹ میں زیادہ سے زیادہ سکور 236 رنز پر 6 کھلاڑی آﺅٹ ہے جو اس نے جنوبی افریقہ کے خلاف بنایا تھا جبکہ یہ ٹیم سری لنکا کے خلاف کم سے کم سکور 101 پر آﺅٹ ہوئی تھی۔ ویسٹ انڈیز نے 2012ءمیں سری لنکا میں منعقد ہونے والا ٹی 20 ورلڈکپ اپنے نام کیا تھا۔

اس فہرست میں آٹھواں نمبر بھارتی ٹیم کا ہے جو اب تک 60 میچ کھیل کر 34 جیت چکی ہے اور 24 میچوں میں اسے شکست کا سامنا کرنا پڑا ہے۔ بھارتی ٹیم نے پہلا ٹی 20 ورلڈکپ بھی جیتا تھا اور فائنل میں پاکستان کو سنسنی خیز مقابلے کے بعد شکست دی تھی۔ بھارتی ٹیم کا زیادہ سے زیادہ سکور 218 ہے جو اس نے 2007ءمیں انگلینڈ کے خلاف ڈربن میں کھیلے گئے میچ میں بنایا تھا۔ میچ کی خاص بات یووراج سنگھ کے 6 بالوں پر لگاتار 6 چھکے تھے جو انہوں نے برطانوی باﺅلرز سٹورٹ براڈ کو جڑے تھے۔ بھارتی ٹیم 2008ءمیں آسٹریلیا کے خلاف میلبورن کرکٹ گراﺅنڈ میں کھیلے گئے میچ میں کم سے کم سکور 74 پر بھی آﺅٹ ہو چکی ہے۔

فہرست میں نواں نمبر بنگلہ دیش کا ہے کو جو اب تک 50 میچ کھیل کر صرف 15 میچ جیتی ہے اور 34 میچوں میں اسے شکست کا سامنا کرنا پڑا۔ بنگلہ دیش نے 2010ءمیں نیوزی لینڈ کے خلاف ہیملٹن میں کھیلے گئے میچ میں سب سے زیادہ 190 رنز بنا رکھے ہیں جبکہ اس کا کم سے کم سکور78 ہے جو اس نے نیوزی لینڈ کے خلاف ہملٹن میں ہی بنایا تھا۔

اس فہرست میں آخری نمبر پر زمبابوے کی ٹیم آتی ہے جو اب تک 48 میچ کھیل کر صرف 10 میچ ہی جیت سکی ہے اور 37 میچوں میں اسے شکست کا سامنا کرنا پڑا ہے۔ زمبابوے کی ٹیم نے سب سے زیادہ سکور 200 رنز پر 2 کھلاڑی ہے جو اس نے 2012ءمیں نیوزی لینڈ کے خلاف ہملٹن میں کھیلے گئے میچ میں بنایا تھا جبکہ یہ نیوزی لینڈ کے خلاف ہی 2010ءمیں کم سے کم سکور 84 پر بھی آﺅٹ ہو چکی ہے۔زمباوے کی ٹی 20 کرکٹ تاریخ میں اب تک کا سب سے یادگار لمحہ آسٹریلیا کو شکست دینا ہے۔ زمبابوین ٹیم نے ٹی 20 ورلڈکپ 2007ءمیں آسٹریلیا کو صرف 138 رنز تک محدود کر دیا تھا اور بعد ازاں صرف ایک گیند قبل ہدف حاصل کر کے آسٹریلیا کو تاریخی شکست سے دوچار کیا تھا۔

زمبابوے کی ٹی 20 کرکٹ میں یادگار لمحہ ٹی 20 ورلڈکپ 2007ءمیں آسٹریلیا کو شکست دینا ہے جب آسٹریلیا نے 138 رنز بنائے اور زمبابوے نے صرف ایک گیند قبل ہدف حاصل کر لیا۔

مزید : کھیل