آئی سی سی میں بگ تھری کی اجارہ داری ختم کرنے کا فیصلہ ،چیئرمین کا انتخاب خفیہ رائے شماری سے کرانے کی تجویز

آئی سی سی میں بگ تھری کی اجارہ داری ختم کرنے کا فیصلہ ،چیئرمین کا انتخاب خفیہ ...
آئی سی سی میں بگ تھری کی اجارہ داری ختم کرنے کا فیصلہ ،چیئرمین کا انتخاب خفیہ رائے شماری سے کرانے کی تجویز

  

دبئی(مانیٹرنگ ڈیسک) انٹرنشنل کرکٹ کونسل (آئی سی سی) ایگزیکٹو کمیٹی نے ورلڈ گورننگ باڈی میں بھارت، آسٹریلیا اور انگلینڈ کی اجارہ داری کو ختم کرنے کا فیصلہ کر لیا، اس کے علاوہ آئی سی سی چیئرمین کو آزاد اور خود مختار رکھنے اور اگلے چیئرمین کا انتخاب خفیہ رائے شماری سے کرنے کی تجویز پیش کی گئی، جون میں شیڈول آئی سی سی بورڈ اجلاس میں اس حوالے سے حتمی فیصلہ کیا جائے گا۔

نجی ٹی وی کے مطابق  انٹرنیشنل کرکٹ کونسل کے ہیڈکوارٹر دبئی میں آئی سی سی بورڈ اجلاس منعقدا ہوا جس میں آئی سی سی کی ایگزیکٹو کمیٹی نے انگلینڈ، آسٹریلیا اور بھارت کی مستقل نشست کو ختم کرنے کا فیصلہ کرلیا ہے جس کے بعد آئی سی سی انتظامیہ میں بگ تھری کی اجارہ داری ختم ہوجائے گی۔ اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ بگ تھری کے خاتمے کا فیصلہ اور آئی سی سی کے 2014 میں منظور ہونے والے آئین کا از سر نو جائزہ رواں سال جون میں ہی کیا جائے گا۔ اس کے علاوہ اجلاس میں یہ بھی فیصلہ کیا گیا کہ آئی سی سی کے نئے چئیرمین کا انتخاب جون 2016 میں ہونے والی بورڈ میٹنگ میں خفیہ رائے شماری کے ذریعے کیا جائے گا اورنئے منتخب ہونے والے چئیرمین کو آزاد اور خود مختاررکھا جائے گا۔ آئی سی سی چیئرمین کے امیدوار کیلئے ضروری ہے کہ وہ بطور آئی سی سی ڈائریکٹر خدمات انجام دے چکا ہو اور وہ دو سالہ مدت کیلئے تین بار چیئرمین بننے کے اہل ہوں گے۔ آئی سی سی کے چیئرمین ششانک منوہر نے اپنے بیان میں کہا کہ اجلاس میں بہت مثبت فیصلے کئے گئے ہیں اور مجھے یقین ہے کہ اس کے اچھے نتائج سامنے آئیں گے۔ انہوں نے بتایا کہ اجلاس میں اس کے علاوہ کرکٹ کو اولمپکس اور کامن ویلتھ گیمز میں شامل کرنے کے حوالے سے بھی تبادلہ خیال کیا گیا تاہم اس پر ابھی مزید کام کرنے کی ضرورت ہے۔ انہوں نے کہا کہ آئی سی سی کا کوئی رکن دوسرے سے بڑا نہیں، ہمارے نزدیک سب برابر ہیں اور میں تمام اراکین کی حمایت سے اس سلسلے میں ایک بامعنی شراکت بنانے کیلئے پر عزم ہوں۔ آئی سی سی نے رواں سال ہائی پرفارمنس پراجیکٹس اور ڈویلپمنٹ کی بھی منظوری دی ہے اور خصوصی منصوبوں کے بجٹ سے انہیں فنڈز فراہم کئے جائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ آئی سی سی کے سالانہ چار اجلاسوں میں سے تین متحدہ عرب امارات سے باہر منعقد ہوں گے جبکہ آئی سی سی کی سالانہ کانفرنس 27 جون سے 2 جولائی تک ایڈنبرگ میں منعقد ہو گی۔ واضح رہے کہ بھارت ، انگلنیڈ اور آسٹریلیا نے 2014 میں آئی سی سی پراجارہ داری قائم کرنے کے لئے بگ تھری کے نام سے مافیا بنا کر قبضہ کرنے کی کوشش کی تھی جس کے تحت آئی سی سی کو حاصل ہونے والے منافعے کے بڑے حصے پر ان تینوں بورڈ کا حق تھا۔ 

مزید : کھیل