حج درخواستیں 15تا 24جنوری جمع کرائی جاسکیں گی، وزارت مذہبی امور 26تاریخ کو قرعہ اندازی کرے گی

حج درخواستیں 15تا 24جنوری جمع کرائی جاسکیں گی، وزارت مذہبی امور 26تاریخ کو قرعہ ...

ملتان (سٹی رپورٹر)بنکوں کی مختلف برانچوں میں حج درخواستیں 15جنوری سے(بقیہ نمبر35صفحہ12پر )

جمع کرنا شروع کی جائیں گی جوکہ 24جنوری تک جاری رہیں گی جبکہ وزارت مذہبی امور26جنوری کو حج قرعہ اندازی کرے گا قر عہ اندازی میں نام نکلنے والے عازمین کرام اسی دن آن لائن سسٹم کے ذریعے اپنا نام نکلنے یا نہ نکلنے کے حوالے سے معلومات حاصل کر سکیں گے وزارت مذہبی امور نے حج 2018 کے لئے پاکستان کا حج کوٹہ 1لاکھ 79ہزار2سو10کر دیا ہے جبکہ سال 2018کے لئے حج پیکج کا بھی اعلان کر دیا ہے جس کے مطابقشمالی ریجن (پنجاب اور خیبر پختونخواہ) 2,80,000 روپے جنوبی ریجن (کراچی، کوئٹہ اور سکھر) 2,70,000 روپے پچھلے سال کے حج پیکیج کوبرقرار رکھا گیا ہے۔اگر ناگزیر وجوہات کی وجہ سے اضافہ کرنا پڑا تو اضافی رقم حکومت پاکستان برداشت کرے گی۔اسی طرح قربانی کے ۔/13,050روپے اس حج پیکیج کے علاوہ جمع کروانا ہونگے عوام کے پُر زور اصرار پر حج سکیم 2018 کے لئے سرکاری سکیم کا کوٹہ مزید بڑھا کر1لاکھ 20ہزار حجاج اور پرائیویٹ سکیم کیلئے 59ہزار 2سو 10حجاج کر دیا گیا ہے۔ حج کا دورانیہ 30 دن تک لانے کے لئے تمام اسٹیک ہولڈرز کے ساتھ مشاورت کی جائیں گی سرکاری سکیم کے تحت حج درخواستیں15جنوری سے لیکر24جنوری تک وصول کی جائیں گی اور 26جنوری، 2018کو قرعہ اندازی کی جائے گی حج درخواستیں مخصوص بینکوں کی نامزد برانچوں میں وصول کی جائیں گی۔تمام بینک حج درخواستوں کی مد میں جمع ہونے والی رقم کو شریعہ اکاونٹ میں رکھیں گے۔ بینکوں اور ان کی مخصوص برانچوں کا اعلان جلدہی اشتہار کے ذریعے کیا جائے گا۔حجاج کا انتخاب شفاف انداز میں قرعہ اندازی کے ذریعے عمل میں لایا جائے گا۔149 80سال سے زائد عمر رسیدہ درخواست گزاروں بمعہ ایک صحت مند مددگار (جن کا درخواست گزار سے خونی رشتہ ہواور درخواست دینے کا اہل ہو) کے لئے10ہزار کا کوٹہ مختص کیا گیا ہے۔ اگر یہ درخواستیں 10ہزار سے زائد موصول ہوئیں تو ان کا انتخاب عمر کے لحاظ سے سینیارٹی کی بنیاد پر کیا جائے گا149 ایسے درخواست گزار جو پچھلے تین یا اس سے زیادہ سالوں سے مسلسل ناکام ہوتے آ رہے ہیں ان میں سے 10ہزار درخواست گزاروں کا انتخاب ایک الگ قرعہ اندازی کے ذریعے عمل میں لایاجائے گا۔ اس قرعہ اندازی میں ناکام درخواست گزاروں کو عمومی قرعہ اندازی میں بھی دوبارہ شامل کر کے کامیاب ہونے کا ایک اور موقع دیا جائے گا۔گذشتہ روایت کو برقرار رکھتے ہوئے اس سال بھی کسی کو مفت حج نہیں کروایا جائے گا۔کوئی بھی شخص جس نے زندگی میں صرف ایک بار بھی سرکاری سکیم کے تحت حج اداکیا ہوا ہو، وہ حج 2018کے لئے سرکاری سکیم میں درخواست دینے کا اہل نہیں ہو گا۔ اس کے علاوہ کوئی بھی شخص جس نے گذشتہ 3سالوں میں حج اداکیا ہو، وہ حج 2018کے لئے پرائیویٹ سکیم میں درخوست دینے کا اہل تصورنہیں ہو گا۔ اس ضمن میں صرف خاتون کے محرم کو استثنیٰ حاصل ہو گا۔ بین الاقوامی مشین ریڈایبل پاسپورٹ، کمپیوٹرائزڈ قومی شناختی کارڈ اور میڈیکل سرٹیفیکیٹ لازم ہو گا۔ مشین ریڈایبل پاسپورٹ کی کم از کم معیاد 20فروری 2019تک ہونی چاہیے۔

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...