ریسکیو 1122کی سالانہ 2017کا رکردگی رپورٹ جاری

ریسکیو 1122کی سالانہ 2017کا رکردگی رپورٹ جاری

پشاور(سٹی رپورٹر)ایمر جنسی ریسکیو سروس (ریسکیو1122) کے صو بائی ہیڈ کوارٹر میں ادارے کی سالانہ رپور ٹ کے حوالے سے جا ئزہ لیا گیا ۔ اجلا س کی صدرات کرتے ہوئے ڈائر یکٹر جنرل ڈاکٹر اسد علی خا ن نے کہا کہ ریسکیو 1122نے نہ صرف عوام کو سہولیا ت فراہم کیں بلکہ ان کے بچاؤ کے لیے پولیس ، سکول کالجز، یو نیورسٹیز، سرکاری اور غیر سرکا ری اداروں کے 1 لاکھ سے زائد افراد کو ابتدائی طبی امداد اور آگ سے نمٹنے کی مفت تر بیت فراہم کی جبکہ صوبا ئی حکومت کے تعاون سے عوام کی فلا ح و بہبود کے لیے اقدامات اٹھا ئے جن میں اپنی نوعیت کا پا کستا ن میں پہلا مو با ئل ہسپتال بس یو نٹ، منی ایمبو لینس سروس ، بلند وبالا عمارت تک رسائی حا صل کر نے کے لیے سنو رکل ،ریسکیو اہلکارو ں کی تعداد میں اضا فہ ، جد ید اور بین الا قومی طرز کے آلات اور ریسکیو 1122کے کنٹریکٹ ملا زمین کو ریگولر کیا گیا ۔ ریسکیو 1122اس وقت خیبر پختونخوا کے 6اضلا ع پشاور، مردان، نو شہرہ ،ڈی آئی خان ، ایبٹ آباد اور سوات میں خدما ت فراہم کر رہا ہے جبکہ لواری ٹنل پر ریسکیو 1122کے اضا فی اہلکار تعینا ت کیے گئے ہیں۔ ڈاکٹر اسد علی خان نے کہا کہ ریسکیو 1122کو سال 2017میں 26لاکھ کا لز مو صول ہو ئیں جن میں 45ہزار سے زائد ایمر جنسی کالز پر عوام کو سہولیات فراہم کی گئیں جن میں 31ہزار میڈیکل ایمر جنسیز،10ہزار ٹریفک حا دثا ت ، 1653آگ کے واقعات ، 1539ڈوبنے کے واقعات ، مختلف نو عیت کے39دھما کے ، 869جرائم کے واقعا ت اورعمارت گرنے کے 82واقعات شامل ہیں جبکہ 43ہزار افراد کو میڈیکل سہولیات فراہم کرتے ہوئے ہسپتال منتقل کیا گیا ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر