کراچے سے حویلیاں جانیوالی ہزارہ ایکسپریس حادثے سے بال بال بچ گئی 

      کراچے سے حویلیاں جانیوالی ہزارہ ایکسپریس حادثے سے بال بال بچ گئی 

  



ملتان(نمائندہ خصوصی)کراچی سے حویلیاں جانے والی ہزارہ ایکسپریس حادثے سے بال بال بچ گئی ملتان ریلوے اسٹیشن پر  ڈرائیور کی لاپرواہی،اچانک بریک لگا کر سپیڈ بڑھانے سے گاڑی دو حصوں میں تقسیم ہوگئی،دو گھنٹے مسافر سردی میں ٹھٹھرتے رہے تفصیل کے مطابق جمعرات کو رات گئے کراچی سے حویلیاں جانے والی ہزارہ ایکسپریس حادثے سے بچ گئی ملتان ریلوے اسٹیشن پر ہزارہ ایکسپریس دو حصوں میں تقسیم ہوگئی ہزارہ ایکسپریس کی 6 اور 7 نمبر بوگی الگ ہوگئی،ڈرائیور نے لاپرواہی کا مظاہرہ کرتے (بقیہ نمبر35صفحہ12پر)

ہوئے اچانک بریک لگا کر سپیڈ بڑھا دی جس سے دونوں بوگیوں کے درمیان لگا ہک ٹوٹ گیا، عینی شاہدین کے مطابق ڈرائیور نے اچانک بریک لگا کر دوبارہ سپیڈ دے دی جس کے باعث حادثہ پیش آیا، ہزارہ ایکسپریس کو دوبارہ چلانے کے لئے مرمتی کام جمعرات کی رات دو گھنٹے تک جاری رہا،ہزارہ ایکسپریس دو گھنٹے ملتان ریلوے اسٹیشن پر رکی رہی جسے ٹھیک کرنے کے بعد روانہ کردیا گیا،حادثے کے باعث ٹرین خراب ہونے سے مسافروں کو شدید پریشانی کا سامنا بھی رہا۔ ادھر  زکریاایکسپسریس کی اکانومی کلاس بوگی خراب ہونے سے کمرشل سٹاف کی ڈوریں لگ گئیں۔بتایاجاتاہے کہ کراچی سے ملتان آنے والی زکریاایکسپریس کی ایک اکانومی کلاس بوگی خراب ہوگی ٹرین کی ملتان آمدسے قبل ریزرویشن سٹاف ملتان نے خراب ہونے والی بوگی کی ریزرویشن کاعمل مکمل کرلیاتھا۔تاہم جیسے ہی بوگی کے خراب ہونے کی اطلاع موصول ہوئی توکمرشل انسپکٹرسمیت کمرشل سٹاف کی ڈوریں لگ گئیں۔ٹرین کی روانگی سے قبل متبادل بوگی کاانتظامیہ کرکے اس پرخراب بوگی کی ریزرویشن والے مسافروں کی سیٹوں اوربرتھوں کے نمبرلگائے گئے۔اچانک بوگی تبدیل ہونے پرمسافروں کونئی بوگی میں منتقل ہونے کی وجہ سے پریشانی کاسامناکرناپڑا۔متبادل بوگی لگانے اوراس میں مسافروں کوپہلے والی بوگی کی ریزرویشن کے مطابق منتقل کرنے کی وجہ سے ملتان سے کراچی کے لئے زکریاایکسپریس  مقررہ وقت شام4بجے کی بجائے5بجے روانہ ہوئی۔

حادثہ ریلوے 

مزید : ملتان صفحہ آخر