سوئی گیس گھنٹوں غائب‘ شہریوں کی مشکلات میں اضافہ‘ ہوٹلوں پر رش 

  سوئی گیس گھنٹوں غائب‘ شہریوں کی مشکلات میں اضافہ‘ ہوٹلوں پر رش 

  



 ملتان،خانیوال‘ فقیر والی (سٹاف رپورٹر،نما ئندہ پاکستان،نامہ نگار)سوئی گیس کی طویل اعلا نیہ بند ش کے باعث شہریوں کی مشکلات بڑھ گئیں گزشتہ تین ہفتو ں سے رہائشی علا قوں بلاک نمبر 1تا16،کالو نی نمبر1 تا 3، پیپلز کالونی،نظام آ باد،بستی ظہورآ باد اور دیگر علاقوں میں گیس کی غیر اعلانیہ (بقیہ نمبر12صفحہ12پر)

لوڈ شیڈنگ کا دورانیہ 24گھنٹوں تک بڑھا دیاگیا ہے جس کے باعث شدید سردی میں بزرگو ں بچو ں،مریضو ں اور خواتین کو شدید مشکلا ت کا سامنا ہے۔سماجی تجا رتی حلقوں نے وزیر اعظم پاکستان اور چیئرمین سوئی گیس سے نو ٹس لے کر گیس کی فراہمی کا مطا لبہ کیا ہے۔دوسری جانب گیس نہ ہو نے کے باوجود صارفین کو موصول ہونے والے گیس کے بھاری بلو ں کا نو ٹس لینے کا بھی مطا لبہ کیا ہے۔  گیس سپلائی کی مین ٹی پی ایس پرانہ شمع سنیما روڈپر لگی ہوئی ہے، جس پر مشتمل علاقہ جات میں ہاؤسنگ کالونی اور اس سے ملحقہ علاقوں مدینہ کالونی پکی منڈی گلشن اقبال کالونی یہاں گیس کا اخراج قدرے بہتر ہے، لہذا یہی لائن بلدیہ کالونی، گرلز کالج روڈ،  دھوبی گھاٹ، ٹبہ نور پورہ،قبرستان روڈو دیگر علاقہ جات کی طرف جاتی ہے ایک ٹی پی ایس قبرستان روڈ پر بھی منظور ہے محکمہ کی یقین دھانی کے باوجود ٹی پی ایس نہیں چالو کی جا سکی،لیکن اس گنجان آباد علاقہ کی آبادی متوسط اور غریب لوگوں کے طبقہ سے تعلق رکھتی ہے اس آبادی کا کوئی بھی پرسان حال نہیں، محکمہ سوئی گیس کو عوامی شکایات کے باجود ابھی تک عوامی ریلیف کے لئے کچھ بھی نہیں کیا گیا  اگر یہ منظور شدہ ٹی پی ایس لگادیں تو عوام کی پریشانی کا ازالہ ہو سکتا ہے،، لہذا منظور شدہ کنکشن کو فوری بحال کیا جائے محکمہ کی طرف سے بار بار یقین دھانی کے باوجود نہیں لگائی جارہی جس کی وجہ سے بلدیہ کالونی ٹبہ نور پورہ، شرقیہ ٹبہ کے دیگر علاقوں میں سوئی گیس پریشر انتہائی کم چولہوں میں گیس نہ ہونے کے برابر  ہے، یہاں کے لوگ سخت تکلیف میں مبتلا ہے، تمام گھریلو کام کاج ادھورے ہوچکے ہیں بچوں بڑوں کا ناشتہ تیار ہو سکتا ہے  اورنہ ہی دن رات کا کھاناآسانی سے تیار کیا جا  سکتا ہے، گیس کی قلت اور شدید بحران نے عوام کی زندگی کو اجیرن بنا رکھا ہے، سماجی و شہری حلقوں نے اوگرا،جی ایم لاہور، آر ایم بھاولپور ملک بشیر احمد سے ممتاز سماجی و سیاسی شخصیات ڈاکٹرمیاں الیا س خالد،شیخ رئیس احمد،مراتب علی کاہلوں،چوہدری مدثر،آصف اعجاز،سمیت دیگر عوامی سماجی حلقوں نے فوری نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے کہ ان علاقہ جات کے مکینوں کو ریلیف دینے کے لئے موثر اقدامات کو بروئے کار لایا جائے۔  جبکہ ہوٹلوں میں رش بڑھ گیا ہے۔ 

ہوٹلوں /رش 

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...