زرعی پیداوار کو فروغ دینے کیلئے  زیڈ ٹی بی ایل قرضوں پر شرح سود  میں کمی کرے، احمد جواد

زرعی پیداوار کو فروغ دینے کیلئے  زیڈ ٹی بی ایل قرضوں پر شرح سود  میں کمی کرے، ...

  



اسلام آباد (اے پی پی) وفاق ایوانہائے صنعت و تجارت پاکستان (ایف پی سی سی آئی) کے بزنس پینل کے فیڈرل سیکرٹری جنرل احمد جواد نے زرعی ترقیاتی بینک لمیٹڈ (زیڈ ٹی بی ایل) کی انتظامیہ پر زور دیا ہے کہ زرعی قرضوں پر شرح سود میں کمی کے اقدامات کرے تاکہ زرعی شعبہ کی استعداد سے حقیقی استفادہ کے ذریعے پیداوار کو فروغ حاصل ہو، زرعی پیداوار میں اضافہ سے غذائی تحفظ کو یقینی بنانے کے ساتھ ساتھ دیہی معیشت کی ترقی میں مدد ملے گی۔ احمد جواد نے جمعہ کو اے پی پی سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ اس وقت زرعی ترقیاتی بینک کی جانب سے زرعی شعبہ کو قرضوں کی فراہمی پر 18.25 فیصد شرح سود وصول کی جارہی ہے جو زیادہ ہے اور اس سے زرعی مداخل کی قیمت بڑھنے سے پیداواری اخراجات بڑھ جاتے ہیں۔ احمد جواد نے کہا کہ ماضی کی حکومتوں نے سیاسی فائدہ کے لئے ملک کے مختلف شہروں میں بینک کی غیر ضروری برانچز قائم کیں جس سے بینک کے انتظامی اخراجات بڑھ گئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ بینک کی انتظامیہ نے اخراجات پر قابو پانے کے لئے شرح سود میں اضافہ کیا تاکہ بینک کو نقصان سے بچایا جاسکے۔ انہوں نے کہا کہ زرعی ترقیاتی بینک کاشتکار طبقہ کے لئے شرح سود میں فوری کمی کے اقدامات کرے تاکہ چھوٹے کاشتکار کو سہولت حاصل ہو۔ 

انہوں نے کہا کہ زرعی بینک کو زرعی شعبہ کی ترقی کے لئے قائم کیا گیا تھا اور اس کا مقصد کاشتکار طبقہ کو سستے قرضوں کی فراہمی تھا۔ احمد جواد نے کہا کہ اگر زرعی بینک بھی دیگر بینکوں کی شرح سود پر قرضے فراہم کرے تو پھر اس کے قیام کا مقصد ہی ختم ہو جاتا ہے اس لئے ضروری ہے کہ بینک شرح سود میں کمی کے لئے فوری اقدامات کرے۔

مزید : کامرس