ترمیمی آرمی ایکٹ سینیٹ کے بعد متعلقہ قائمہ کمیٹیوں میں جائے گا، شبلی فراز 

 ترمیمی آرمی ایکٹ سینیٹ کے بعد متعلقہ قائمہ کمیٹیوں میں جائے گا، شبلی فراز 

  



اسلام آباد (آئی این پی)سینیٹ میں قائد ایوان سینیٹر شبلی فراز نے کہا ہے کہ ترمیمی آرمی ایکٹ سینیٹ سے پاس ہونے کے بعد متعلقہ سٹیڈنگ کمیٹیوں میں جائے گا جہاں دونوں جماعتوں کی نمائندگی ہوتی ہے اگر وہاں اس میں کوئی ترمیم کرنا چاہئیں تو یہ راستہ کھلا ہے، تمام پارٹیوں کو اتفاق ہے کہ نیب میں ترمیم کرکے اس کو موثر بنایا جائے گا۔جمعہ کو نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے سینیٹ میں قائد ایوان سینیٹر شبلی فراز نے کہا کہ ترمیمی آرمی ایکٹ سینیٹ سے پاس ہونے کے بعد متعلقہ سٹیڈنگ کمیٹیوں میں جائے گا جہاں دونوں جماعتوں کی نمائندگی ہوتی ہے اگر وہاں اس میں کوئی ترمیم کرنا چاہئیں تو یہ راستہ کھلا ہے۔انہوں نے کہا کہ تمام پارٹیوں کو اتفاق ہے کہ نیب میں ترمیم کرکے اس کو موثر بنایا جائے گا۔ مسلم لیگ ن اور پیپلز پارٹی کو اس بات کا احساس ہو گیا ہے کہ  کامن ایجنڈا ہونا چاہیے۔ ہمیں ایک دوسرے کے ساتھ تعاون کرنا چاہیے تاکہ حکومت اور اپوزیشن میں جو خلیج آتی ہے وہ پیدا نہ ہو۔ مل کر ایسی قانون سازی کریں جو مستقبل کے لئے بھی موثر ہو۔ انہوں نے کہا کہ 2020 پچھلے سال سے کافی مختلف ہو گا اس میں اصلاحات ہو گی۔ اپوزیشن اور حکومت میں تناؤ کم ہو گا۔ تحریک انصاف احتساب سب کے لئے کے ووٹ پر حکومت میں آئی ہے لیکن زائد المیعاد ہونے کی وجہ سے نیب اس طرح کام نہیں کر سکا جس طرح کی اس سے توقع ہے اس لئے نیب قوانین میں ترمیم ہونا چاہیے۔ ہم یہ توقع کرتے ہیں کہ حکومت نے جو قدم بڑھایا ہے اسے آئندہ بھی بڑھایا جائے گا۔

 شبلی فراز 

مزید : صفحہ آخر