قبرستان

قبرستان

  



بچپن میں ابو ہمیں ڈراتے تھے کہ قبرستانوں میں جن ہوتے ہیں، چڑیلیں جادو کر دیتی ہیں۔ ہم ڈر جاتے۔پھٹی قبروں اور مردوں کی ہڈیوں سے چیخوں کا شور سنائی دینے لگتا۔

ابو کہتے:”بیٹا گھر اچھے ہوتے ہیں۔ سرشام گھر آجایا کرو۔اپنے سکول بیگ کو کھولا کرو اور کتابوں میں دل لگایا کرو۔گھر میں جن، چڑیلیں اور جادو کا خوف نہیں ہوتا۔گھر میں ماں اور باپ کا سایہ ہوتا ہے۔“

مگر جب سے ابو قبرستان کا حصہ ہوئے ہیں۔گھر بھوتوں کا مسکن لگتا ہے اور سرشام ہم سب بہنیں، بھائی اور امّاں قبرستان چلے جاتے ہیں۔

رات کو گھر میں جن اور قبرستان میں ہم ابو کے ساتھ رہتے ہیں۔

مزید : ایڈیشن 1


loading...