اس سال بھی فسادات ہوسکتے ہیں، برطانوی پولیس کا انتباہ

اس سال بھی فسادات ہوسکتے ہیں، برطانوی پولیس کا انتباہ

 لندن (جی این آئی)برطانوی پولیس نے خبردار کیا ہے کہ ملک میں اس سال بھی گذشتہ اگست کی طرز پر فسادات ہوسکتے ہیں، پولیس نے یہ خدشہ پولیس کے بجٹ میں ہونے والی بڑے پیمانے پر کٹوتیوں کے بعد ظاہر کیا ہے، گذشتہ سال اگست میں ہونے والے فسادات کے اسباب کے دوران سے کئے گئے ایک سروے میں یہ نتیجہ اخذ کیا گیاہے کہ گذشتہ برس کے فسادات سے نمٹنے کے لئے تعینات پولیس افسران کو یقین ہے کہ اس سال میں بھی ملک میں فسادات ہوسکتے ہیں، ان کا کہنا ہے کہ ملک کی معاشرتی اور بگڑتی ہوئی اقتصادی صورتحال کی وجہ سے گذشتہ اگست جیسے فسادات ہوسکتے ہیں، اب افسران نے یہ خدشہ بھی ظاہر کیا ہے کہ کٹوتیوں کی وجہ سے پولیس کے پاس اتنی فورس نہیں ہوگی کہ وہ ان فسادات کو فوری اور موثر طور پر روک سکے یا ان سے نمٹ سکے، سروے رپورٹ میں8 پولیس فورسز کے 130 افسران سے انٹرویو کئے گئے ہیں، یہ انٹرویو گارڈین اور لندن سکول آف اکنامکس نے لئے ہیں اور ان میں سارے پولیس افسران نے اس بات سے اتفاق کیاکہ لندن، برمنگھم، لیور پول، مانچسٹر اور سالفورڈ میں ہونے والے فسادات دوبارہ بھی ہوسکتے ہیں، ان افسران نے کہاکہ یہ فسادات سارے پولیس افسروں جسمانی اور نفسیاتی سطح پر شدید دبا کا باعث تھے اور انہیں اس بات پر حیرت ہے کہ ان فسادات میں کسی پولیس افسر کی ہلاکت نہیں ہوتی، مانچسٹر پولیس کے ایک سپرنٹنڈنٹ نے کہاکہ انہیں توقع ہے کہ ان فسادات کے ایک سال کے اندر اندر دوبارہ فسادات ہوں گے۔، انہوں نے اس کی وجہ یہ بتائی کہ ملک کے اندر اقتصادی حالات موافق نہیں ہیں، اس لئے فسادات ہوسکتے ہیں۔

مزید : عالمی منظر