مسلم میڈیکل مشن کا ہنگامی اجلاس، ڈاکٹروں کی گرفتاریوں کی مذمت

مسلم میڈیکل مشن کا ہنگامی اجلاس، ڈاکٹروں کی گرفتاریوں کی مذمت

لاہور(جنرل رپورٹر) ینگ ڈاکٹرز کی گرفتاریوں اور تشدد کے خلاف مسلم میڈیکل مشن کا ہنگامی اجلاس، تازہ ترین صورتحال پر غور و فکر کیا گیا۔ڈاکٹرز کی برطرفیوں، تشدد اور بلیک لسٹ کرنے کے اقدامات کی شدید مذمت ، حکومت ڈاکٹرز کی ہڑتال کے مسئلہ پر طاقت سے نمٹنے کی بجائے مذاکرات کا راستہ اپنائے اور گرفتار ڈاکٹرز کو رہا کیا جائے۔ حکومت اور ینگ ڈاکٹرز دونوں اپنے موقف میں نرمی پیدا کرتے ہوئے مفاہمت کی راہ اپنائیں۔ اجلاس کے دوران رہنماﺅں کی گفتگو، تفصیلات کے مطابق مسلم میڈیکل مشن کے صدر پروفیسر ڈاکٹر ظفر اقبال چوہدری کی زیر صدارت ینگ ڈاکٹرز کی گرفتاریوں کے دوران تشدد اور ان کی برطرفیوں کے خلاف ایک اجلاس ہوا جس میں ینگ ڈاکٹرز کی ہڑتال اور حکومتی اقدامات کے بعد پیدا ہونے والی تازہ ترین صورتحال پر تفصیل سے غور و فکر کیا گیا۔ اجلاس کے دوران رہنماﺅں نے گرفتار ڈاکٹرز کی رہائی کا مطالبہ کیا اور کہا کہ ایک سال قبل ان کے ساتھ سروس سٹرکچر بہتر بنانے کا جو وعدہ کیا گیا تھا وہ پورا کیا جائے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1