اسامہ نے دولت اور زندگی جہاد کے لئے وقف کی، مشن جاری رکھیں گے، الظواہری

اسامہ نے دولت اور زندگی جہاد کے لئے وقف کی، مشن جاری رکھیں گے، الظواہری

قاہرہ (آن لائن) القاعدہ کے سربراہ ایمن الظواہری نے اپنے پیشرو اسامہ بن لادن کی جہادی خدمات کو سراہتے ہوئے کہا ہے کہ انہوں نے اپنی ساری دولت اسلامی جہاد پر خرچ کی۔ اپنی ذاتی آسائشوں کو ترک کرکے وہ دشمن پر حملوں کے لئے رقم فراہم کرتے رہے۔ غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق ایمن الظواہری نے ےہ بات ویب سائیٹ پر جاری اےک انٹرویو میں کہی جو القاعدہ کا سربراہ بننے کے بعد دوسرے روز ریکارڈ کی گئی تھی۔ منظر عام پر آنیوالی اس ویڈیو میں ایمن الظواہری کا کہنا تھا کہ وہ اسامہ بن لادن کے جہادی مشن کو نہ صرف ہر صورت جاری رکھیں گے بلکہ ان کی تقلید کرتے ہوئے اسے مزید تقویت دےنے کےلئے اپنی تمام تر صلاحیتوں کو بروئے کارلائیں گے۔ اپنے پیشرو کی زندگی پر تبصرہ کرتے ہوئے ایمن الظواہری کا کہنا تھا کہ اسامہ بن لادن اےک امیرترین گھرانے میں پیدا ہوئے لےکن انہوں نے اپنی تمام تر آسائش کو ختم کرکے اپنی زندگی اور تمام دولت جہاد کےلئے صرف کردی اور خاص طور پر جب انہوں نے 1996ءمیں سوڈان چھوڑا تو وہ شدید مالی مشکلات کا شکار ہوئے۔ اسامہ بن لادن نے کینیا میں 1998ءکو امریکی سفارتخانے میں بم حملوں کےلئے 50 ہزار ڈالرز فنڈ فراہم کئے ۔ا س وقت ان کے ذاتی اکاﺅنٹ میں صرف55 ہزار ڈالرز موجود تھے۔ اسامہ نے ہمیشہ تمام مجاہدین کو ترغیب دی کہ وہ پرآسائش زندگی کے بجائے بجلی کے بغیر گرمی اور سردی میں رہنے کو اپنی عادت بنائیں چونکہ پرتعیش زندگی جہاد کو متاثر کرتی ہے۔

مزید : ایڈیشن 1