نوجوان جوڑے کو اپنی شادی تقریب کے آغاز سے صرف 30 منٹ پہلے منسوخ کرنا پڑ گئی ،وجہ ایسی کہ شائد آج تک کہیں بھی شادی اس وجہ کینسل نہ ہوئی ہو،جان کر آپ کو افسوس بھی ہو گا اور ہنسی بھی آ ئے گی

نوجوان جوڑے کو اپنی شادی تقریب کے آغاز سے صرف 30 منٹ پہلے منسوخ کرنا پڑ گئی ...
نوجوان جوڑے کو اپنی شادی تقریب کے آغاز سے صرف 30 منٹ پہلے منسوخ کرنا پڑ گئی ،وجہ ایسی کہ شائد آج تک کہیں بھی شادی اس وجہ کینسل نہ ہوئی ہو،جان کر آپ کو افسوس بھی ہو گا اور ہنسی بھی آ ئے گی

  

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) برطانیہ میں علاقے کمبریاکی ایک کونسل کے نااہل ملازمین نے ایک جوڑے کی خوشیاں غارت کر دیں اور ان کی شادی ہی منسوخ کروا دی۔ برطانوی اخبار دی میٹرو کی رپورٹ کے مطابق جان کیننگ اور اس کی دلہن کرسٹی سلون اپنی شادی کے لیے بہت پرجوش تھے۔ انہوں نے اپنی شادی کو یادگار بنانے کرسٹی کے والد کی یاد میں تقریب کا اہتمام کمبریا کے پرفضاءعلاقے میں کیا تھا اور 200میل سفر کرکے یہاں پہنچے تھے۔ مگر شادی سے عین 30منٹ قبل کونسل کے ملازمین ان کے پاس آئے اور ایسی خبر سنائی کہ ان کے دل ہی ٹوٹ گئے۔ ملازمین نے انہیں بتایا کہ وہ ان کی شادی کے کاغذات ہی گم کر بیٹھے ہیں لہٰذا اب ان کی شادی نہیں ہو سکتی۔ وہ رجسٹرار کے پاس گئے تو اس نے بھی بتایا کہ ان کی شادی کے کاغذات نہیں مل رہے۔

47سالہ جان کیننگ کا کہنا تھا کہ ”کرسٹی کے والدکا چند سال قبل اس علاقے میں انتقال ہوگیا تھا۔ ہم نے اس لیے شادی کی تقریب کا یہاں اہتمام کیا کہ ایک طرف یہ علاقہ بہت خوبصورت ہے اور ساتھ ہی یہ کرسٹی کے والد کو بھی شادی کے موقع پر یاد کرنے کا بہترین طریقہ ہو گا۔ مگر کونسل کے ملازمین نے ہماری خوشیوں پر پانی پھیر دیا ہے۔ شروع میں تو ہم سمجھے کہ وہ مذاق کر رہے ہیں لیکن جب انہوں نے یقین دلایا تو ہمارا دل بیٹھنے لگا۔ ہمارے ساتھ 60مہمان بھی آئے ہوئے تھے۔“ رپورٹ کے مطابق اب اس جوڑے نے پیسلے میں اپنی شادی کی تقریب رکھی ہے اور کمبریا کونسل سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ اس تقریب کے اخراجات اٹھائے کیونکہ ان کی غلطی کی وجہ سے گزشتہ تقریب کے اخراجات رائیگاں گئے تھے۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -