ایپ کے ذریعے پرواز کرنے والی ہوائی ٹیکسی

ایپ کے ذریعے پرواز کرنے والی ہوائی ٹیکسی
ایپ کے ذریعے پرواز کرنے والی ہوائی ٹیکسی

  

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) امریکا میں بااثر اور امیر افراد کے لیے ذاتی ہیلی کاپٹر ٹیکسی کی سہولت کی آزمائش اسی سال سے شروع ہوگی۔اس سروس کوایئرونسی کا نام دیا گیا ہے اوراس کا مقصد رش کے اوقات میں لوگوں کو ان کی منزل تک پہنچانا ہے، اسے ایک ایپ کے ذریعے کنٹرول کرنا ممکن ہوگا جب کہ ایئرونسی میں اوپر کی جانب ایک ڈکٹ فین ہوگا جو اسے فکس روٹر ایئرکرافٹ ڈرون بناتے ہیں۔کمپنی کے مطابق یہ سروس ایک دن ذاتی ہیلی کاپٹر کا متبادل بن جائے گی کیونکہ ایئرونسی ہیلی کاپٹرکم خرچ اور کم جگہ گھیرتے ہیں اورانہیں شہری ماحول کے لیے بنایا گیا۔ اس ضمن میں اہم آزمائش کا سلسلہ اگلے ماہ شروع کیا جائے گا اور کوشش کی جائے گی کہ اسے کم سے کم خرچ میں تیار کیا جائے۔ہیلی کاپٹر ڈیزائن کرنے والے انجینئر طارق ابراہیم کا کہنا ہے کہ حفاظتی بیلٹ باندھنے کے بعد آپ خودکار پرواز ( آٹونومس فلائٹ) کا آپشن منتخب کرسکتے ہیں، ہوائی ٹیکسی کو مرکزی نظام کی جانب سے کنٹرول کیا جائے گا۔ طارق ابراہیم کے مطابق اس وقت ہیلی کاپٹر کی پنکھڑیوں، انجنوں اور فلائٹ سسٹم کی سخت آزمائش کی جارہی ہے۔کمپنی کے مطابق ایئرونسی میں 28 ہارس پاور کے انجن لگائے جائیں گے اور پنکھڑیوں کا گھیر 7 فٹ ہوگا، اس وقت ہیلی کاپٹر کے 2 ڈیزائن تیار کیے گئے ہیں جب کہ یہ 2017 تک امریکا میں عام دستیاب ہوں گے۔

مزید :

صفحہ آخر -