آٹا چکی مالک نے نوجوان مارڈالا،2سالہ بچہ حادثے میں چل بسا

آٹا چکی مالک نے نوجوان مارڈالا،2سالہ بچہ حادثے میں چل بسا

  

میلسی،دائرہ دین پناہ(نمائندگان)آٹے کے وزن کے تنازع پر چکی مالک نے نوجوان کو تشدد کرکے مارڈالا،دوسالہ بچہ ٹریکٹر تلے آکر جاں بحق ہوگیا۔میلسی سے تحصیل رپورٹر اور سپیشل رپورٹر کے مطابق آٹے کے وزن کے تنازعہ پر چکی مالک نے نوجوان کو مار ڈالا۔ بتایا جاتا ہے کہ نواحی علاقے گہنوری بلوچ میں محمد تنویر گندم پسوانے کے لئے احمد نواز کی چکی پر لے گیا۔ جب وہ آٹا اٹھانے دوبارہ چکی پر گیا تو احمد نواز نے اس کے سامنے وزن کر نے سے انکار کر دیا۔ جس پر دونوں کے درمیان تکرار شروع ہو گئی۔ اس اثناء (بقیہ نمبر39صفحہ12پر )

میں احمد نواز نے اسے مارنا شروع کر دیا ۔ مکا لگنے سے وہ موقع پر ہی دم توڑ گیا۔آٹا تولنے کا کہنے پر قتل ہونے والے گنہوی بلوچ کے نوجوان محمد تنویر کا پوسٹمارٹم 14گھنٹے بعد تحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال میں کر دیا گیا اور پولیس تھانہ کرمپور نے ملزمان احمد نواز، فرید اور نذیر کیخلاف مقدمہ درج کر لیا ہے ۔دائرہ دین پناہ سے نمائندہ خصوصی اور نامہ نگار کے مطابق کالی پل کے رہائشی محمد رمضان کھیارہ کا دو سالہ بیٹا احمد گھر میں کھڑے ٹریکٹر سے کھیل رہا تھا بنے نکالنے والا ہل اوپر اچانک گرنے سے بچہ موقع پر جانبحق ہو گیا ۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -