گجرات جیل میں ہنگامہ آرائی، جیل سپریٹنڈنٹ سمیت 9 اہلکاروں کو معطل کرکے گرفتار کرلیا گیا

گجرات جیل میں ہنگامہ آرائی، جیل سپریٹنڈنٹ سمیت 9 اہلکاروں کو معطل کرکے ...
گجرات جیل میں ہنگامہ آرائی، جیل سپریٹنڈنٹ سمیت 9 اہلکاروں کو معطل کرکے گرفتار کرلیا گیا

  

گجرات (ڈیلی پاکستان آن لائن) گجرات جیل میں ہنگامہ آرائی پر وزیر اعلیٰ عثمان بزدار کی ہدایت پر جیل سپریٹنڈنٹ سمیت 9 اہلکاروں کو معطل کرکے مقدمہ درج کرلیا گیا۔

وزیر اعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار کی صدارت میں گجرات جیل میں ہنگامہ آرائی کی صورتحال پر اجلاس ہوا ۔ وزیر اعلیٰ کے حکم پر جیل سپریٹنڈنٹ سمیت 9 اہلکاروں کو معطل کرکے گرفتار کرلیا گیا۔ گرفتار جیل عملے کو مقدمہ درج کرتے ہوئے تھانہ سول لائن کی حوالات میں بند کردیا ہے۔

وزیراعلیٰ نے جیلوں میں فوری طورپر شکایات بکس رکھوانے کی ہدایت کردی اور محکمہ جیل خانہ جات کے کرپٹ افسروں اوراہلکاروں کی فہرستیں بنانے کا حکم دے دیا۔

خیال رہے کہ جمعرات کو گجرات جیل میں قیدیوں نے انتظامیہ کے رویے کے خلاف احتجاج کیا تھا، اس دوران قیدی جیل کی چھتوں پر چڑھ گئے۔ قیدیوں نے الزام لگایا کہ کورونا وائرس کا بہانہ کرکے کئی مہینوں سے اہلخانہ سے ملاقات نہیں کرائی جارہی، جو قیدی رشوت دیتا ہے اس کو گھر والوں سے ملنے دیا جاتا ہے۔ قیدیوں نے یہ الزام بھی عائد کیا کہ کئی قیدی کورونا میں مبتلا ہیں لیکن جیل انتظامیہ کسی کا بھی ٹیسٹ نہیں کر ارہی۔

کئی گھنٹے تک جاری رہنے والی ہنگامہ آرائی کے دوران قیدیوں کی جانب سے پتھراؤ جبکہ پولیس کی جانب سے آنسو گیس کی شیلنگ کی گئی جس کے نتیجے میں 3 قیدی اور 6 پولیس اہلکار زخمی ہوگئے تھے۔

مزید :

علاقائی -پنجاب -گجرات -اہم خبریں -