پارلیمنٹ بلوچستان کے بے گھر افراد کی واپسی اور بحالی کی نگرانی کریگی: اسد قیصر

  پارلیمنٹ بلوچستان کے بے گھر افراد کی واپسی اور بحالی کی نگرانی کریگی: اسد ...

  

اسلام آباد(آن لائن) اسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر جو قومی اسمبلی کی خصوصی کمیٹی برائے بلوچستان کے چیئرمین بھی ہیں کی زیرصدارت بلوچستان کے اندرونی طور پر بے گھرافراد (آئی ڈی پیز) کی واپسی اور صوبے میں دیگر ترقیاتی منصوبوں کے سلسلے میں جمعہ کے روز پارلیمنٹ ہاوس میں اجلاس ہوا جس میں وزیر دفاع پرویز خٹک، وزیر توانائی عمر ایوب، وزیر نجکاری محمد میاں سومرو، وزیر اعظم کے مشیر برائے پٹرولیم ندیم بابر، ایم این اے شاہ زین بگٹی، سیفران اور انرجی کی وزارتوں، بلوچستان حکومت اور نادرا کے نمائندوں نے شرکت کی۔ اسپیکر نے کہا کہ موجودہ حکومت بلوچستان میں امن وامان کی بحالی اور ترقی کو بہت اہمیت دیتی ہے۔ بلوچستان قدرتی وسائل سے مالامال ہے جن کو صحیح طریقے سے استعمال نہیں کیا گیا۔ سی پیک پورے ملک خصوصا بلوچستان کے لئے گیم چینجر کی حیثیت رکھتا ہے اور اس کے تحت جاری منصوبوں کی تکمیل سے صوبے میں ترقی اور خوشحالی کے نئے دور کا آعازہو گا۔انہوں نے کہا کہ امن و امان کی خراب صورتحال کی وجہ سے بلوچستان کے لوگوں کی ایک بڑی تعداد کو اپنے آبائی گھروں کو چھوڑنا پڑا تاہم امن وامان کی موجودہ صورتحال میں ان کا اپنے گھروں کو واپس آنے اور صوبے میں ترقیاتی سرگرمیوں میں شامل ہونے کا بہترین وقت ہے۔ پارلیمنٹ بے گھر افراد کی مشکلات سے بخوبی آگاہ ہے اور اس سارے عمل کی نگرانی کرے گی۔ وزارت سیفران، حکومت بلوچستان اور نادرا کے نمائندوں نے شرکاء کو بے گھر افراد کی واپسی کے عمل میں ایس او پیزسے آگاہ کیا۔ چیئرمین نادرا نے آگاہ کیا کہ آئی ڈی پیز کا ڈیٹا اکٹھا کر کے متعلقہ حکام کو فراہم کیا جائے گا۔ اسپیکر نے کہا کہ بلوچستان کے عوام کے مسائل کو حل کرنا ہماری قومی ذمہ داری ہے اور ہر ایک کو نہایت دل جمی سے اپنا اپنا کردار ادا کرنا چاہئے۔وفاقی وزرا نے حکومت کی جانب سے اس عمل کی انجام دہی میں ہر ممکن تعاون کا یقین دلایا۔

اسدقیصر

مزید :

صفحہ آخر -