سانحہ سوپور کے باوجودعالمی ضمیر کیوں بیدارنہیں ہوا،الطاف شاہد

سانحہ سوپور کے باوجودعالمی ضمیر کیوں بیدارنہیں ہوا،الطاف شاہد

  

لاہور(پ ر)پاک سر زمین پارٹی برطانیہ کے صدرچوہدری محمد الطاف شاہد نے کہا ہے کہ سانحہ سوپور کے باوجودعالمی ضمیرکیوں بیدارنہیں ہوا۔اِس بربریت کے باوجودبھارت کی اُس طرح سے بازپرس نہیں کی گئی جس طرح کرنے کی ضرورت تھی۔ شہید کشمیریوں کے جنازے اٹھانے کاسلسلہ رکنے میں نہیں آرہا۔

کشمیری شہداء کاگناہ کیا ہے اورا ن کے قاتل ابھی تک آزاد کیوں ہیں۔بھارت کے باوردی درندوں کے ہاتھوں تین برس کے معصوم نواسے کے روبروا س کے بزرگ نانا کے قتل سے انسانیت کاجنازہ اٹھ گیا۔جنونی مودی کے دوراقتدار میں بچوں،جوانوں اورخواتین سمیت ہرعمر کے کشمیریوں کوموت کے گھاٹ اتاراجارہا ہے۔۔اپنے ایک بیان میں چوہدری محمد الطاف شاہد نے مزید کہا ہے کہ دنیا کی مقتدرقوتوں نے ابھی تک کشمیریوں کے جنازوں کی گنتی کرنے کے سواکچھ نہیں کیا۔کیامعصوم کشمیری بچے کے روبرواس کے بیگناہ ناناکی شہادت عالمی ضمیر کوجھنجوڑنے کیلئے کافی نہیں۔انہوں نے کہا کہ بھارت کے ساتھ اس زبان میں بات کی جائے جووہ سمجھتا ہے۔ سوپور میں بشیراحمدخان شہید کوبازارجاتے ہوئے کارسے زبردستی اتارکرگولیاں ماریں،اس دلخراش واقعہ پر ہرباضمیر انسان کی آنکھیں اشکبار ہیں لیکن عالمی ضمیرابھی تک نیند کے مزے لے رہا ہے۔انہوں نے کہا کہ عالمی ضمیر کواپنی خاموشی توڑناہوگی ورنہ مسلمانوں کیلئے ہندوستان پوری طرح قبرستان بن جائے گا۔آٹھ ملین کشمیریوں کونریندرمودی کے رحم وکرم پرنہیں چھوڑاجاسکتا۔کشمیر میں آئے روز بیگناہ کشمیریوں کی ٹارگٹ کلنگ اقوام متحدہ کی رِٹ پرایک بڑاسوالیہ نشان ہے۔انہوں نے کہا کہ آزادی سمیت اپنے مستقبل کافیصلہ کرنے کشمیریوں کابنیادی حق ہے جوسلب نہیں کیا جاسکتا۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -