وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود کیلئے نئی پریشانی، عہدہ ہاتھ سے جانے کا خطرہ 

وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود کیلئے نئی پریشانی، عہدہ ہاتھ سے جانے کا خطرہ 
وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود کیلئے نئی پریشانی، عہدہ ہاتھ سے جانے کا خطرہ 

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) وفاقی وزیر تعلیم و وزیر قومی ورثہ شفقت محمود کے لیے نئی پریشانی کھڑی ہوگئی اور ان سے ایک عہدہ واپس لے لیے جانے کا خطرہ پیدا ہوگیا، عدالت نے فریقین کو نوٹس جاری کردیئے ۔ 

تفصیلات کے مطابق درخواست گزار نے موقف اپنایا کہ ادبی ورثہ کاادارہ 18ویں ترمیم کےبعدصوبوں کومنتقل ہوچکا،وفاق کاادارہ ختم کرکےشفقت محمودکوکام سےروکاجائے،درخواست گزار نے شفقت محمود کو بطور وزیرقومی تاریخ و ادبی ورثہ کام سےروکنےکی درخواست کے ساتھ ساتھ ڈی جی نیشنل کونسل آف آرٹس فوزیہ سعیدکی تعیناتی بھی چیلنج  کی ۔

جسٹس گل حسن اورنگزیب نےدرخواست پرتحریری حکم جاری کردیا اور  شفقت محمود، اسٹیبلشمنٹ ڈویژن، سیکرٹری قومی ورثہ، نیب، فوزیہ سعید کو نوٹس  کرتے ہوئے دو ہفتوں میں جواب طلب کرلیا۔

یادرہے کہ شفقت محمود اس وقت وہ عمران خان کی کابینہ میں وزیر تعلیم اور قومی ورثہ کی خدمات سر انجام دے رہے ہیں۔

مزید :

قومی -