سی اے اے کالائسنس مشکوک یاجعلی نہیں ہوسکتا،شاہد خاقان عباسی

سی اے اے کالائسنس مشکوک یاجعلی نہیں ہوسکتا،شاہد خاقان عباسی
سی اے اے کالائسنس مشکوک یاجعلی نہیں ہوسکتا،شاہد خاقان عباسی

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)سابق وزیراعظم اور ن لیگ کے نائب صدر شاہد خاقان عباسی نے کہاہے کہ سی اے اے امتحانات کے بعدلائسنس جاری کرتاہے،سی اے اے کالائسنس مشکوک یاجعلی نہیں ہوسکتا۔

شاہد خاقان عباسی نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہاکہ پریس کانفرنس سیاست یا کسی کی پگڑی اچھالنی نہیں ہے،ماضی میں پی آئی اے کو چلایا ہے ،پاکستان کا ایوی ایشن سیکٹر دنیا کا مانا ہوا سیکٹر ہے ،پاکستان ایوی ایشن کی ساکھ خطرے میں ہے ،ہم نے دنیا کے سامنے 262 پائلٹس کے لائسنسز مشکوک ہونے کااعتراف کیا ہے ،انہوں نے کہاکہ یہ مسئلہ پی آئی اے یا کسی ایئرلائن کانہیں بلکہ سول ایوی ایشن کا ہے،کپتان بننے سے پہلے تحریری امتحان ہوتاہے،اعلان ہواکہ 626 لائسنس جعلی یامشکوک ہیں،دنیامیں ہمارامذاق بنا،262 مشکوک پائلٹس کوشوکازجاری کیاجائے۔

شاہد خاقان عباسی نے کہاکہ انکوائری میں پائلٹ کی جعلسازی ثابت ہونے پرنکال دیناچاہئے،پائلٹس کوکورٹ آف انکوائری میں صفائی کاموقع ملناچاہئے،رشوت سے نوکریاں لینے اوردینے والوں کیخلاف کارروائی ہونی چاہئے،جو فہرست دی گئی ہے اس میں 6 پائلٹ پی آئی اے سے ریٹائرڈہوچکے،فہرست میں شامل 10 پائلٹس کاکیس عدالت میں چل رہاہے،رولزکے مطابق بورڈآف انکوائری 30 روزمیں کارروائی مکمل کرے، سی اے اے کے پاس اختیارہے کہ لائسنس منسوخ،بحال یامعطل کرے۔

مزید :

قومی -علاقائی -اسلام آباد -