سندھ حکومت اور محکمہ صحت کی مجرمانہ غفلت: جیکب آباد میں خسرہ کی وباء سے سیکڑوں بچے متاثر، 2ماہ میں 76اموات 

سندھ حکومت اور محکمہ صحت کی مجرمانہ غفلت: جیکب آباد میں خسرہ کی وباء سے ...

  

جیکب آباد(آئی این پی)جیکب آباد ضلع میں خسرہ کی وباء نے تباہی مچادی، وباء نے گذشتہ دو ماہ میں 76 بچوں کو نگل لیا، سندھ حکومت اور محکمہ صحت کی مجرمانہ غفلت، کوئی نوٹس نہیں لیا، کئی بچے خسرہ کی وباء میں مبتلا، مزید اموات کا خدشہ ہے۔ تفصیلات کے مطابق جیکب آباد ضلع بھر میں خسرہ کی وباء نے تباہی مچائی ہوئی ہے اور گذشتہ دوماہ کے دوران ضلع بھر کے مختلف علاقوں میں 76 بچوں کی اموات رپورٹ ہوئی ہیں جبکہ اس وقت بھی کئی بچے خسرہ کی وباء میں مبتلا ہیں جیکب آباد میں خسرہ کی وباء سے بچوں کی اموات کا سندھ حکومت یا محکمہ صحت نے تاحال کوئی نوٹس نہیں لیا جس کی وجہ سے مزید اموات کا خدشہ ظاہر کیا جارہا ہے، جیکب آباد ضلع کی تحصیل ٹھل اس وقت سب سے زیادہ متاثر ہے صرف ٹھل تحصیل میں اب تک 56 بچوں کی اموات رپورٹ کی گئی ہیں، خسرہ سے متاثرہ علاقوں کے لوگوں کا کہنا ہے کہ اس وقت بھی سینکڑوں بچے اس جان لیوا وباء میں مبتلا ہیں لیکن محکمہ صحت کی جانب سے اس کی رو ک تھام یا علاج کے لیے کوئی اقدامات نہیں کئے گئے، انہوں نے مطالبہ کیا ہے کہ خسرہ کی وباء پر قابو پانے کیلئے ہنگامی بنیادوں پر اقدامات کرکے معصوم بچوں کی زندگیاں بچائی جائیں۔

خسرہ کی وباء

مزید :

صفحہ آخر -