بجٹ مظلوم عوام پر حکومت کا خوفناک اقتصادی حملہ ہے، سیاستدان

بجٹ مظلوم عوام پر حکومت کا خوفناک اقتصادی حملہ ہے، سیاستدان

لاہور (جنرل رپورٹر، سٹاف رپورٹر) مختلف سیاسی مذہبی راہنماﺅں نے وفاقی حکومت کی طرف سے پیش کردہ 2014-15ءبجٹ کو مظلوم عوام پر حکومت کا بجٹ کی صورت میں دوسرا خوفناک اقتصادی حملہ قرار دیا گیا ہے راہنماﺅں نے کہا کہ حکومت کی طرف سے پیش کردہ بجٹ عام آدمی کا بجٹ نہیں ہے بجلی گیس کے بدترین بحران میں گھیرتے ہوئے لوگوں پر کہیں ریلگولر اور کہیں ایڈوانس ٹیکسوں کا اضافہ لاگو کرنے کے خوفناک نتائج برآمد ہوں گے اس سے بجلی گیس چوری میں اضافہ ہوگا اور عوام زندہ درگور ہوجائیں گے اس حوالے سے گفتگو کرتے ہوئے مسلم لیگ (ق) کے سینیٹر کامل علی آغا نے کہا کہ حکومت کے بجلی کے بلوں کو آمدن سے منسلک کرکے ٹیکس عائد کرنے کے فیصلے سے بجلی چوری میں خوفناک اضافہ ہوجائے گا انہوں نے کہا کہ یہ حکومت کا نہیں آئی ایم ایف کا بجٹ ہے تحریک انصاف کے مرکزی رہنما جہانگیر خان ترین نے کہا کہ حکومت نے عوام کا نہیں آئی ایم ایف کا بجٹ پیش کیا ہے اس بجٹ کے اثرات مہنگائی کے طوفان کی صورت میں سامنے آئیں گے اس بجٹ کو عوامی بجٹ نہیں کہا جاسکتا۔ مسلم لیگ (ن) کے رہنما اقبال ظفر جھگڑا نے کہا ہے کہ حکومت نے دوسری مرتبہ ایک بھرپور عوامی بجٹ پیش کیا حکومت نے ایک عوام دوست، غریب دوست بجٹ پیش کیا ہے بجٹ میں غریب پر کوئی اثر نہیں پڑے گا عوام اور عوام دوست بجٹ پیش کرنے پر وزیراعظم کو مبارکباد پیش کرتے ہیں اس بجٹ سے آمدنی بڑھے گی اور ٹیکس چور ٹیکس نیٹ میں آئیں گے۔سیکرٹری جنرل جماعت اسلامی پاکستان لیاقت بلوچ نے کہاہے وزیر خزانہ نے مایوس کن بجٹ پیش کیاہے ۔

 سیاستدان

مزید : علاقائی