وزیر اعلٰی پنجاب کا کنگ ایڈورڈ میڈیکل یونیورسٹی کے مرید کے کیمپس کیلئے 2ارب روپے گرانٹ کا اعلان

وزیر اعلٰی پنجاب کا کنگ ایڈورڈ میڈیکل یونیورسٹی کے مرید کے کیمپس کیلئے 2ارب ...

                            لاہور(پ ر) وزیراعلیٰ محمد شہباز شریف نے کہا ہے کہ صحت عامہ حکومت کی ترجیحات میں شامل ہے اور پنجاب حکومت عوام کو بہتر سے بہتر علاج معالجہ کی سہولتوں کی فراہمی کیلئے وسائل کی کمی نہیں آنے دے گی۔ ڈاکٹرز مقدس اور مسیحائی پیشہ سے وابستہ ہیں اور دکھی انسانیت کی خدمت کا حلف ان سے اس بات کا تقاضا کرتا ہے کہ وہ دکھی انسانیت کی خدمت میں جت جائیں۔ ڈاکٹرز جتنی محنت ایم بی بی ایس کی ڈگری حاصل کرنے کیلئے کرتے ہیں اس سے زیادہ محنت انہیں اپنے حلف کی پاسداری کیلئے کرنی چاہیئے تاکہ پسے ہوئے عوام کے دکھوں کا مداوا ہو سکے۔ ڈاکٹرز ضابطہ اخلاق کی پاسداری کے عہد پر کاربند رہتے ہوئے بلارنگ و نسل و عقیدہ دکھی انسانیت کی خدمت کریں اور دیہی و بنیادی مراکز صحت کو آباد کریں۔ جس طرح ڈاکٹروں کے مسائل ہیں اسی طرح دکھی انسانیت کے بھی مسائل ہیں۔ ان خیالات کا اظہار وزیراعلیٰ شہبازشریف نے کنگ ایڈورڈ میڈیکل یونیورسٹی کے سالانہ کانووکیشن سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ وزیراعلیٰ نے نئے گریجوایٹس کو مبارکباد دیتے ہوئے کہا کہ بلاشبہ اب آپ عملی میدا ن میں قدم رکھ رہے ہیں اور جہاں آپ کے والدین اور اساتذہ کو بہت سی امیدیں وابستہ ہیں وہاں اس صوبے کے عوام بھی آپ سے توقعات رکھتے ہیں کہ آپ ہیلتھ کئیر سسٹم کی بہتری کیلئے اپنا بھرپور کردار ادا کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ کنگ ایڈورڈ میڈیکل یونیورسٹی کی سالانہ تقریب میں شرکت میرے لئے باعث اعزاز ہے اور یہ ادارہ کئی دہائیوں سے نامور ڈاکٹرز پیدا کر رہا ہے جو پاکستان اور بیرون ممالک میں دکھی انسانیت کی خدمت کرکے ملک و قوم کا نام روشن کر رہے ہیں۔ ادارہ میڈیکل ایجوکیشن کے فروغ اور اس شعبے میں تحقیق کے حوالے سے بھی قابل قدر خدمات سرانجام دے رہا ہے۔ حکومت پنجاب نے مریدکے میں کنگ ایڈورڈ میڈیکل یونیورسٹی کے نئے کیمپس کے قیام کیلئے 120 ایکڑ اراضی فراہم کی ہے۔ انہوں نے کیمپس کی تعمیر کیلئے 2 ارب روپے کی گرانٹ کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ صحت کے شعبہ کی بہتری کیلئے جتنے وسائل درکار ہیں فراہم کئے جائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ بہترین طبی سہولیات کی فراہمی پر جج، جرنیل، سیاست دان، وزرائ، پولیس افسران اور اشرافیہ کا ہی نہیں بلکہ عام شہری کا بھی پورا حق ہے۔ ڈاکٹرز دیہی و بنیادی مراکز صحت، تحصیل و ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹرز ہسپتالوں میں بھی جائیں اور دکھی انسانیت کی خدمت کریں۔ انہوں نے کہا کہ ڈاکٹرز جس طرح بیرون ملک جا کر اپنی صلاحیتوں کا لوہا منواتے ہیں اور ملک کا پرچم بلند کرتے ہیں اسی طرح انہیں یہ کردار وطن عزیز کے دور دراز اور پسماندہ علاقوں میں بھی ادا کرنا چاہیئے۔ اور یہی وہ طریقہ ہے جسے اپنا کر پاکستان بین الاقوامی برادری میں اپنا کھویا ہوا مقام حاصل کر سکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ وسائل کی کوئی کمی نہیں ہے، شعبہ صحت کے ماہرین ہمارے ساتھ مل بیٹھ کر ہیلتھ کئیر سسٹم کو بہتر سے بہتر بنانے کیلئے تجاویز اور سفارشات دیں۔ انہوں نے کہا کہ ترک حکومت نے ضلع مظفرگڑھ میں جدید ترین طیب اردگان ہسپتال تعمیر کیا ہے اور اس ہسپتال کو مکمل آﺅٹ سورس کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ ہسپتال کے فنکشنل ہونے کے بعد جنوبی پنجاب کے لوگوں کو علاج کیلئے لاہور یا کراچی نہیں جانا پڑے گا بلکہ لاہور، کراچی اور دیگر شہروں کے لوگ علاج معالجہ کیلئے اس ہسپتال کا رخ کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ ملک کی تقدیر بدلنے کا واحد راستہ محنت، امانت، دیانت جیسے سنہری اصولوں پر عمل پیرا ہونا ہے۔ ان اصولو ںکو اپنا کر ہم ملک کو حقیقی معنوں میں قائدؒ اور اقبالؒ کا پاکستان بنا سکتے ہیں۔قبل ازیں کنگ ایڈورڈ میڈیکل کالج یونیورسٹی کے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر فیصل مسعود نے خطبہ استقبالیہ پیش کرتے ہوئے ادارے کی تعلیمی سرگرمیوں پر روشنی ڈالی۔ انہوں نے کہا کہ ادارے کے تعلیمی معیار کو بہتر سے بہتر بنانے کیلئے ٹھوس اقدامات کئے جا رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ تعلیم کے شعبے میں سرمایہ کاری وزیراعلیٰ محمد شہبازشریف کا وژن ہے، اسی مقصد کے تحت پنجاب حکومت نے مریدکے میں یونیورسٹی کے نئے کیمپس کے قیام کیلئے وسیع قطعہ اراضی فراہم کیا ہے۔ وزیراعلیٰ نے پوزیشن ہولڈر ڈاکٹروں میں گولڈمیڈلز تقسیم کئے۔ یونیورسٹی کے وائس چانسلر نے وزیراعلیٰ کو یادگاری شیلڈ پیش کی۔ مشیر صحت خواجہ سلمان رفیق ،پارلیمانی سیکرٹری برائے صحت خواجہ عمران نذیر، فیکلٹی ممبران، پروفیسرز، ڈاکٹر، طلبا و طالبات، والدین اور ماہرین صحت نے کانووکیشن میں شرکت کی۔ وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہباز شریف کی زیرصدارت ےہاں اعلیٰ سطح کا اجلاس ہوا جس مےںوزےراعلیٰ نے لاہور مےں کےنسر ہسپتال و رےسرچ سنٹر کے قےام کے منصوبے کی منظوری دی۔خواجہ محمد صفدر مےڈےکل کالج سےالکوٹ کے پرنسپل ڈاکٹر ظفر علی نے کےنسر ہسپتال اوررےسرچ سنٹر کے قےام کے منصوبے کے حوالے سے برےفنگ دی۔وزےراعلیٰ محمد شہباز شرےف نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کےنسر ہسپتال اور رےسرچ سنٹر کے منصوبے کے لئے نالج پارک مےں اراضی مختص کی جائے گی۔کےنسر ہسپتال اوررےسرچ سنٹر کو ٹرسٹ چلائے گا جس کا خود مختار بورڈ آف گورننس ہوگا۔ہسپتال کے ڈاکٹر ز اورعملے کی تربےت کا بےرون ملک اہتمام کےا جائے گا۔انہوں نے کہا کہ کےنسر اےک موذی مرض ہے اور علاج انتہائی مہنگاہے ۔کےنسر ہسپتال اور رےسرچ سنٹرانتہائی اہمےت کا حامل منصوبہ ہے اورمفاد عامہ کے اس منصوبے کو تےز رفتاری سے پاےہ تکمےل تک پہنچاےا جائے گا۔وزےراعلیٰ نے ہداےت کی کہ کےنسرہسپتال کے قےام کے منصوبے کے لئے تمام ضروری اقدامات اٹھائے جائےں ۔مشیر صحت خواجہ سلمان رفیق، چیف سیکرٹری، چیئرمین منصوبہ بندی و ترقیات‘ ڈی جی ایل ڈی اے، ڈی سی او لاہور،کےنسر کے علا ج کے ماہر ڈاکٹرز اور متعلقہ حکام نے اجلاس میں شرکت کی۔وزیراعلی پنجاب محمد شہبازشریف نے کہاہے کہ وفاقی حکومت نے مشکل حالات میںآئندہ مالی سال کےلئے بہترین، عوام دوست اور متوازن بجٹ پیش کیا ہے جس سے ترقی کی نئی را ہیں کھلیں گی- بجٹ میں عام آدمی پر بوجھ نہیں ڈالا گیا بلکہ غریب عوام کے فلاحی پروگراموں کے لئے رقوم میں اربوں روپے کا اضافہ کیا گیاہے جس سے غریب عوام کو ریلیف ملے گا- انہوںنے کہاکہ تعلیم، صحت، زراعت، لائیوسٹاک اور دیگر سماجی شعبوں کی بہتری کے لئے ٹھوس اقدامات تجویز کئے گئے ہیں- انہوںنے کہاکہ ٹیکسٹائل سیکٹر کےلئے خصوصی پیکیج کا اعلان کیا گیاہے جس سے نہ صرف ملک کی برآمدات بڑھیں گی بلکہ ٹیکسٹائل کا شعبہ مضبوط ہوگا- انہوںنے کہاکہ وفاقی بجٹ میں توانائی کے منصوبوں کے لئے 205ارب روپے مختص کئے گئے ہیں جو اس بات کا ثبوت ہے کہ حکومت عوام کو توانائی بحران سے نجات دلانے کے لئے سنجیدہ او رمخلص ہے- انہوںنے کہاکہ چھوٹے کاشتکاروں اور مویشی پا ل کسانوں کی فلاح و بہبود کےلئے بھی متعدد اقدامات تجویز کئے ہیں- ایگزم بنک کے قیام کے فیصلے سے ملک کی برآمدات بڑھیںگی-

مزید : صفحہ اول