دنیا کا خطرناک ترین انٹرویو

دنیا کا خطرناک ترین انٹرویو
دنیا کا خطرناک ترین انٹرویو

  


سنگائیگو (مانیٹرنگ ڈیسک) چلی میں دنیا کے ایک خطرناک ترین انٹرویو کا انعقاد کیا گیا جس نے امیدواروں کے ہوش اڑادئیے اور کئی تو اپنی نشستیں چھوڑ کر بھاگ کھڑے ہوئے مگر یہ اصل میں ایک انٹرویو کے بہانے ٹی وی کی کارکردگی کی جانچ پڑتال تھی۔ رپورٹ کے مطابق اس انٹرویو میں کوئی مشکل سوالات تو نہیں کئے گئے لیکن جس کمرے میں یہ انٹرویو ہورہا تھا اس کا ماحول اتنا دہشت ناک تھا کہ امیدوار جان بچانے کی خاطر بھاگ کھڑے ہوئے۔ ایک ٹی وی بنانے والی کمپنی نے اپنے نئے 82 انچ کے حامل ٹی وی سیٹ کو متعارف کروانے اور اس کی کارکردگی جانچنے کیلئے ایک آفس کی دیوار مکیں اس طرح فٹ کیا کہ جیسے کوئی حقیقی کھڑکی ہو۔ جب کوئی امیدوار اس کمرے مکیں انٹرویو کیلئے اندر آتا تو فوراً اس سکرین پر ایک آگ کا گولہ آسمان سے نمودار ہوتا اور سامنے بلند و بالا عمورتوں پر گر کر ہر طرف تباہی مچادیتا۔ اس دوران مامیدوار جب اس منظرکو دیکھتے تو اس ٹی وی کے عمدہ رزلٹ کی وجہ سے اسے یہ حقیقی منظر اور قدرتی آفت سمجھ کر خوف سے بھاگ جاتے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس