مرکزی بینک کے بھاری قرض کی واپسی ، حکومت نے رقم کہاں سے اکٹھی کی ؟ ایسا انکشاف کہ کسی کا بھی منہ کھلے کا کھلا رہ جائے گا

مرکزی بینک کے بھاری قرض کی واپسی ، حکومت نے رقم کہاں سے اکٹھی کی ؟ ایسا انکشاف ...
مرکزی بینک کے بھاری قرض کی واپسی ، حکومت نے رقم کہاں سے اکٹھی کی ؟ ایسا انکشاف کہ کسی کا بھی منہ کھلے کا کھلا رہ جائے گا

  


اسلام آباد( ویب ڈیسک) آئی ایم ایف سے قرض کی حتمی منظوری سے قبل حکومت نے مرکزی بینک کا قرض واپس کرنا شروع کر دیا، ایک ہفتے کے دوران مرکزی بینک کو تقریبا 26 کھرب روپے واپس مل گئے تاہم دلچسپ اور حیران کن بات یہ ہے کہ واپسی کمرشل بینکوں سے نیا قرض لے کر ہی کی گئی۔

24نیوز نے سٹیٹ بینک کے حوالے سے بتایا کہ  گزشتہ ہفتے کے دوران حکومت نے مرکزی بینک کو 25 کھرب 93 ارب 75 کروڑ روپے لوٹائے, تاہم قرض کی واپسی کے لیے حکومت نے کمرشل بینکوں سے مجموعی طور پر 25 کھرب 62 ارب روپے کا قرض لیا. وفاقی حکومت اب تک مرکزی بینک سے قرض لے کر پرانے قرضوں کی واپسی اور دوسرے اخراجات پورے کر رہی تھی جس کے باعث مئی کے وسط تک مرکزی بینک سے لیے گئے حکومتی قرضوں کا مجموعی حجم 48 کھرب 85 ارب روپے کی بلند ترین سطح پر پہنچ گیا تھا لیکن آئی ایم ایف کے تحفظات کے باعث حکومت نے پاکستان کو قرض کی حتمی منظوری دینے والے ایگزیکٹو بورڈ کے اجلاس سے قبل مرکزی بینک کے قرضوں کی واپسی شروع کر دی.

ذرائع کے مطابق مالی سال کے اختتام تک مرکزی بینک سے رواں سال لیے گئے تمام قرضوں کی واپسی ہو سکتی ہے۔

مزید : بزنس