ملکی سلامتی و خود مختاری کے تحفظ کیلئے کوئی دقیقہ فرو گزاشت نہیں کیا جائیگا: عمران خان

        ملکی سلامتی و خود مختاری کے تحفظ کیلئے کوئی دقیقہ فرو گزاشت نہیں کیا ...

  

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر، مانیٹرنگ ڈیسک، نیوز ایجنسیاں) وزیراعظم عمران خان نے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کے ہمراہ آئی ایس آئی ہیڈ کوارٹرز کا دورہ کیا جہاں انہیں اہم امور پر بریفنگ دی گئی۔اس موقع وفاقی وزرا ء شاہ محمود قریشی، اسد عمر اور معاون خصوصی ڈاکٹر معید یوسف بھی ان کے ہمراہ تھے۔ آئی ایس آئی کے سربراہ لیفٹیننٹ جنرل فیض حمید نے ہیڈ کوارٹرز آمد پر وزیراعظم کا استقبال کیا۔اجلاس کے دوران وزیرِاعظم عمران خان کو پیچیدہ علاقائی و داخلی چیلنجز پر بریفنگ دی گئی اور امن کی بحالی کیلئے پاکستانی کاوشوں سے متعلق تفصیل سے آگاہ کیا گیا۔اس موقع پر وزیراعظم عمران خان نے آئی ایس آئی کی قربانیوں اور انتھک کاوشوں کو خصوصی طور پر سراہا اور کہا ملکی سلامتی اور خود مختاری کے تحفظ کیلئے کوئی دقیقہ فروگزاشت نہیں کیا جائیگا۔ انہوں نے قومی سلامتی کے ادارے کی داخلی اور بیرونی سکیورٹی کو یقینی بنانے سے متعلق کاوشوں کو سراہا اور کہا دہشت گردی کا خاتمہ ہو یا کوئی بھی قومی مفاد سے متعلق معاملہ اس ادارے نے پاکستان کا نام ہمیشہ بلند کیاہے۔ انہوں نے ادارے کی مجموعی کارکردگی کو بھی سراہا۔قبل ازیں وزیراعظم عمران خان نے پیٹرول کی قیمتو ں میں کمی کے باوجود اشیاء ضروریہ کی قیمتوں میں کمی نہ ہونے کا نوٹس لیتے ہوئے نیشنل پرائس کنٹرول کمیٹی کو قیمتوں کی مسلسل نگرانی کی ہدایت کر دی۔وزیراعظم کا کہنا تھا گندم کی نئی فصل مارکیٹ میں آنے کے باوجود آٹے کی قیمتوں میں اضافہ کیوں ہوا، وزرائے اعلیٰ چیف سیکرٹریز کو قیمتوں و کرایوں میں کمی کی خود مانیٹرنگ کی ہدایت دیں، اس حوالے سے وز یراعظم نے نیشنل پرائس مانیٹرنگ کمیٹی کوہفتہ واربنیادوں پر اشیائے ضروریہ کی قیمتوں پر رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت بھی کی، پیٹرولیم مصنوعات سستی ہونے کے اثرات اشیائے ضروریہ کی قیمتوں میں کمی کی صورت میں سامنے آنا چاہیئں، صوبائی حکومتیں مہنگائی کیخلاف کسی بھی قسم کے سخت ایکشن سے گریز نہ کریں۔دوسری جانب وزیراعظم آفس کی جانب سے صوبوں کے وزرائے اعلی، چیف سیکرٹریز اورچیئرمین نیشنل پرائس مانیٹر نگ کمیٹی کو مراسلہ بھی جاری کردیا گیا ہے۔ مراسلے کے مطابق گزشتہ مہینوں میں پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں واضح کمی آئی ہے، اشیائے ضروریہ کی قیمتوں میں کمی کے بجائے اضافہ دیکھنے میں آرہا ہے، حال ہی میں گندم کٹائی مکمل ہوئی، آٹے کی قیمتوں میں اضافے کا کوئی جواز نہیں، صوبائی حکومتیں روزانہ کی بنیاد پر اشیائے ضروریہ کی قیمتوں کی مانیٹرنگ کریں اور نیشنل پرائس مانیٹرنگ کمیٹی صوبوں کے ساتھ ملکر مہنگائی کے خاتمے کے لیے میکنزم بنائے۔اس موقع پر وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ نیشنل پرائس مانیٹرنگ کمیٹی ہفتہ وار اشیائے ضروریہ کی قیمتوں پرنظر رکھے اور پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کمی کافائدہ عام آدمی تک پہنچایا جائے۔دوسری طرف وزیراعظم عمران خان نے کورونا وائرس کے باعث انڈسٹری کی زبوں حالی پر نوٹس لیتے ہوئے وزارت صنعت وپیداوار سے صنعتوں کی بحالی کا پلان طلب کر لیا، انڈسٹری کی صورتحال کے حوالے سے وزیر اعظم کو آج وزارت صنعت اور معاشی ٹیم کے ارکان بریفنگ دیں گے جس میں تمام صنعتوں کی بحالی کا پلان پیش کیا جائے گا، بریفنگ کے دوران وزیراعظم کو کورونا کی وجہ سے متاثرہ صنعتوں کو دیے گئے پیکج کی تفصیلات سے بھی آگاہ کیا جائے گا وزیراعظم کی جانب سے بریفنگ کے بعد انڈسٹریز سے متعلق اہم فیصلے متوقع ہیں۔

وزیراعظم

مزید :

صفحہ اول -